نواز شریف کا نعرہ ’’لوگ احتساب کرینگے ‘‘ عوام کو بیوقوف بنانے کی کوشش : عمران خان

نواز شریف کا نعرہ ’’لوگ احتساب کرینگے ‘‘ عوام کو بیوقوف بنانے کی کوشش : ...
 نواز شریف کا نعرہ ’’لوگ احتساب کرینگے ‘‘ عوام کو بیوقوف بنانے کی کوشش : عمران خان

اسلام آباد(مانیٹرنگ دیسک)تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان نے کہاہے کہ نواز شریف کایہ نعرہ کہ لوگ احتساب کریں گے،عوام کو بیوقوف بنانے کی کوشش ہے، لیکن ایسے نعروں سے لوگوں کو بار بار بیوقوف نہیں بنایا جاسکتا، سماجی رابطے کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر اپنے پیغام میں عمران خان نے کہا کہ لوگ اپنے نمائندوں کو منتخب کرنے کے آئینی حق سے واقف ہیں اورلوگ جانتے ہیں کہ عدالتوں کا کام قانون کی بالادستی قائم رکھنا ہے،چیئرمین تحریک انصاف نے کہا کہ احتساب کرنا بھی عدالتوں کی آئینی ذمہ داری ہے،نوازشریف کا ہجوم سے انصاف کرانے کا نعرہ آئین کی خلاف ورزی ہے۔انہوں نے کہا کہ نواز شریف ثابت کر رہے ہیں کہ فرد جرم سے متعلق ان کے پاس کہنے کو کچھ بھی نہیں،عمران خان نے کہا کہ شریف مافیا منی لانڈرنگ کے ذریعے بھیجے گئے 300 ارب روپے بچانے کیلئے تمام غیرقانونی ذرائع استعمال کرنے کے بعد مایوسی کا شکار ہے۔دریں اثناء بنی گالہ میں تحریک انصاف کے چیئرمین عمران خان سے شیخ رشید نے ملاقات کی جس میں دونوں رہنماؤں نے ملکی سیاسی صورتحال پر تبادلہ خیال کیا گیا۔ عوامی مسلم لیگ کے سربراہ نے عمران خان کو آج قومی اسمبلی اجلاس میں آنے کی درخواست کرتے ہوئے کہا کہ قومی اسمبلی میں نااہل شخص کو پارٹی صدارت سے روکنے کا بل پیش کئے جانے کا امکان ہے۔

عمران خان/ملاقات

اسلام آباد( صباح نیوز) بنی گالہ اسلام آباد میں پیر کوپاکستان تحریک انصاف کی قیادت کا اعلیٰ سطحی اجلاس منعقد ہوا۔ اجلاس کی صدارت چیئرمین عمران خان نے کی۔اجلاس میں وفاقی و صوبائی حکومتوں کی جانب سے اراکین اسمبلی میں 200 ارب روپے کی تقسیم پر انتہائی تشویش کا اظہار کیا گیااورسپریم کورٹ اور الیکشن کمیشن سے فوری نوٹس کا مطالبہ کیا گیا۔اجلاس میں اس بات پر اتفاق کیا گیا کہ پنجاب اور وفاق کی حکومتوں کا اراکین اسمبلی میں 200 ارب کے ترقیاتی فنڈز کی تقسیم نہ صرف ایک سیاسی رشوت ہے بلکہ انتخابات سے قبل قومی خزانے سے بھارے فنڈز کی تقسیم قبل از انتخابات دھاندلی ہے۔اجلاس میں سپریم کورٹ اور الیکشن کمیشن سے سیاسی رشوت ستانی کیلئے قومی خزانے کے اس استعمال کا نوٹس لینے کا مطالبہ کیا گیا۔ تفصیلات کے مطابق اجلاس میں الیکشن ایکٹ 2017 کی دفعہ 203 میں ترمیم پر بھی مفصل تبادلہ خیال کے ساتھ ساتھ مردم شماری اور ممکنہ حلقہ بندیوں کے اہم پہلوؤں پر بھی غور و خوض کیا گیا۔ اجلاس کے شرکا نے نواز شریف اور مافیا کی جانب سے اداروں خصوصاً عدلیہ کیخلاف مہم جوئی کی شدید مذمت کرتے ہوئے ملک کو بحرانی کیفیت سے نکالنے کیلئے فوری انتخابات کے انعقاد کا مطالبہ کیا۔اجلاس میں فیصلہ کیا گیا کہ ملک کے اندرونی و بیرونی سیاسی حالات کے تقاضے کو مد نظر رکھتے ہوئے فوری طور پر عوام سے رجوع کیا جائے۔نیزعوام کے اعتماد اور قومی مینڈیٹ کی حامل حکومت کو پالیسی سازی اور فیصلوں کا اختیار سونپا جائے۔

تحریک انصاف/مطالبہ

مزید : صفحہ اول

لائیو ٹی وی نشریات دیکھنے کے لیے ویب سائٹ پر ”لائیو ٹی وی “ کے آپشن یا یہاں کلک کریں۔


loading...