قادیانی نواز حکومت کا دھڑن تختہ کر دینگے

قادیانی نواز حکومت کا دھڑن تختہ کر دینگے

ملتان (سٹی رپورٹر)سربراہ سنی تحریک محمد ثروت اعجاز قادری نے کہا ہے کہ حکومت طاقت کے نشے (بقیہ نمبر45صفحہ7پر )

میں بدمست ہاتھی بنے کی بجائے ہوش کے ناخن لے،فیض آباد دھرنے میں بیٹھے ہمارے لوگوں پر ریاستی مشینری کا استعمال کیا گیا توپورے ملک میں دما دم مست قلندر ہوگا ، دھرنے کے خلاف طاقت کے استعمال سے ملک میں ایسی آگ لگے گی جس پر قابو پانا مشکل ہو جائے گا، دو وزیروں کو بچانے کے چکرمیں پوری حکومت جائے گی،وفاقی وزیرداخلہ احسن اقبال دھرنے کیخلاف ٹارزن بننے کی بجائے قوم کوجواب دیں کہ بھارتی جاسوس کلبھوشن یادیو کوسرکاری مہمان کیوں بناکررکھاگیاہے؟ ن لیگ حکومت کرنے کااخلاقی وجمہوری جواز کھو چکی ہے، نااہلوں کی حکومت نے ملک غیر ملکی قرضوں کی دلدل میں ڈبو دیا ہے،چوروں اورلٹیروں کی جگہ ایوان اقتدار میں نہیں بلکہ جیل میں ہے،نواز شریف اور ا سکے خاندان کو جیل جانے سے کوئی نہیں روک سکتا، عوام نے اپنافیصلہ دے دیا اب عدلیہ نے فیصلہ کرناہے،مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فوج کے ہاتھوں کشمیری نوجوانوں کاقتل عام رکوانے کیلئے چین کااثررسوخ استعمال کیاجائے،اسلام آباددھرنے کے مطالبات تسلیم نہ کیے گئے تو کراچی سے اسلام آبادتک نتیجہ خیز لانگ مارچ کیاجائے گا جس میں عاشقان رسول قادیانی نوازحکومت کادھرن تختہ کرکے دم لیں گے،ثروت اعجاز قادری کاکہناتھاکہ ختم نبوت کے غداروں کو سزا نہ ملنے کی وجہ سے ملک کے حالات خراب ہو رہے ہیں،حکومت کے پاس عشاقان رسول کے مطالبات ماننے کے سوا کوئی چارہ نہیں،عیدمیلادالنبیؐکی تقریبات اسلام آباد دھرنے میں منائیں گے،پاکستان کا آئین قران سنت کے تابع ہے کسی یہودی لابی اور مرزائیوں کی مرضی نہیں چلنے دیں گے،ختم نبوت کے حلف نامہ میں تبدیلی پر اسلامی نظریاتی کونسل کی پر اسرار خاموشی مجرمانہ ہے، علاج کے بہانے بیرون ملک جانے والے حکومتی کرپٹ وزیروں کو گرفتارکرکے واپس لایاجائے،ملکی سیاسی و مذہبی صورت حال پرلائحہ عمل کے لیے 22 نومبر کو ایوان اقبال لاہور میں سنی تحریک کی مرکزی ، صوبائی اور ڈویثرنل قیادت کا اہم اجلاس منعقد ہوگا، 24 نومبر کو گوجرانوالہ میں تحفظ ختم نبوت مارچ، 26 نومبر کو راولپنڈی جبکہ30 نومبر کو فیصل آباد ، ملتان ، پشاور ، سکھر ، حیدرآباد، کراچی اور کوئٹہ میں ختم نبوت مارچ ہونگے ،10 دسمبر کو کراچی نشتر پارک کراچی میں عوامی طاقت کا بھر پور مظاہرہ کریں گے، حکومت فیض آباد دھرنے کے مطالبات تسلیم کرے ورنہ لاہور میں بھی دھرنا ہوگا، عقیدہ ختم نبوت کی چوکیداری کے لئے کراچی سے خیبر تک تمام اہل سنت متحد ہیں، ملک بھر میں اہل سنت علماء و کارکنان کی گرفتاریاں ناقابل برداشت ہیں، حکومت ہوش کے ناخن لے اور گرفتار علماء و کارکنان کو فی الفور رہا کر کے مقدمات ختم کئے جائیں، راجہ ظفرالحق کمیٹی کی رپورٹ منظر عام پر لائی جائے،راولپنڈی اسلام آباد کے راستے دھرنے کے شرکاء نے نہیں بلکہ انتظامیہ نے خود کنٹینرلگا کر بند کیے ہیں،عوام کو تکلیف سے بچانے کیلئے بند راستوں کو فی الفور کھولاجائے، عدلیہ پر حملہ کرنے والے ہمیں عدالتی فیصلوں کے احترام کادرس نہ دیں،پولیس کے اہلکاروں پرحکمرانوں سے وفاداری کی بجائے سب سے پہلے ناموس رسالتؐ پرپہرہ دینا لازم ہے،وفاقی وزیرقانون زاہدحامدختم نبوت پراپنے ایمان کی وضاحت دینے کی بجائے عہدے سے مستعفی ہوکرمذموم سازش کرنے والے کرداروں کو بے نقاب کریں،ختم نبوت مارچ کے شرکاء سے سنی تحریک پنجاب کے صدرشاداب رضا نقشبندی، لاہورڈویژن کے صدرعلامہ مجاہدعبدالرسول خان، سٹی صدرسردارمحمدطاہرڈوگر، علامہ شیر محمد مجتبائی، علامہ شریف الدین قذافی، علامہ رمضان قادری،شیخ محمدنوازقادری ودیگر نے خطاب کرتے ہوئے کہاکہ ختم نبوت پر ڈاکہ ڈالنے والوں کو قانون کے کٹہر ے میں لائے بغیر چین سے نہیں بیٹھیں گے۔

ثروت اعجاز قادری

مزید : ملتان صفحہ آخر