جدوجہد سے محنت کشوں کی زندگی میں خوشحالی لانا چاہتے ہیں،چوہدری یٰسین

جدوجہد سے محنت کشوں کی زندگی میں خوشحالی لانا چاہتے ہیں،چوہدری یٰسین

اسلام آباد (سٹاف رپورٹر)خطہ پوٹھوہار کی سرزمین بھنگالی شریف میں قائدین سی ڈی اے مزدور یونین کے اعزاز میں ریفرنڈم 2017 ؁ء کے سلسلے میں استقبالیہ تقریب منعقد ہوئی ،تقریب میں خطہ پوٹھوہار سے تعلق رکھنے والے روات ،کلرسیداں ،چوآسیدن شاہ اور چکوال سے تعلق رکھنے والے سی ڈی اے کے سینکڑوں ملازمین نے شرکت کی ،قائدین مزدور یونین کا راستے میں جگہ جگہ ڈھول کی تھاپ پر رقص کرتے ،پھولوں کی پتیاں اورنوٹ نچھاور کرتے ہوئے محنت کشوں نے والہانہ استقبال کیا ،تقریب میں راجہ محمد اشفاق سپروائزر ٹیوب ویل ڈویژن اور ملوٹ سادات گروپ کے سید واصف حسین شاہ ،سید طارق حسین شاہ ،سید افطار حسین شاہ ،ملک ارشد ،اشفاق حسین شاہ ،سید قدیر حسین شاہ ،سید گلفراز حسین شاہ ،سید رفاقت حسین شاہ ،سید انتظار حسین شاہ ،سید ذاکر حسین شاہ ،اذکار حسین شاہ ،سید مہتاب حسین شاہ ،سید شہباز حسین شاہ ،سید اسد عباس ،سید تجمل حسین شاہ ،سید قلب حسین شاہ ، واجد عباسی اور انکے دیگر ساتھیوں نے امان اللہ گروپ کو چھوڑ کر سی ڈی اے مزدور یونین میں شمولیت کا اعلان کیا ،بھنگالی شریف میں ہونے والی تقریب جو مرزا سعید اختر کی رہائش گاہ پر منعقد ہوئی اس تقریب کے مہمان خصوصی پیر بھنگالی شریف مخدوم عباس شاہ تھے ،تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انھوں نے کہا کہ سی ڈی اے میں ہونے والے ریفرنڈم 2017 ؁ء میں ہم چوہدری محمد یٰسین کے ذاتی کردار اور اپنے تعلق کی بنا پر انکی حمایت کا اعلان کرتے ہیں اور سی ڈی اے میں کام کرنے والے جو محنت کش اور عقیدت مند درگاہ بھنگالی شریف سے وابستہ ہیں وہ سی ڈی اے ریفرنڈم میں سی ڈی اے مزدور یونین کے ہاتھ مضبوط کریں ،تقریب کے میزبان مرزا سعید اختر اور مرزا بابو اتحاد کے گروپ لیڈر مرزا نفیس نے قائدین مزدور یونین کا بھنگالی شریف آمد پر شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ خطہ پوٹھوہار کے لوگ ریفرنڈم 2017 ؁ء میں صوفی محمود علی اور اسد محمود کی قیادت میں چوہدری محمد یٰسین کے شانہ بشانہ شریک ہیں ،مرزاسعید اخترنے اس موقع پر بھنگالی شریف میں سی ڈی اے کی طرف سے تعمیر کی جانے والی ڈسپنسری کے لیے ایک کنال زمین عطیہ کرنے کا اعلان کیا ،تقریب کے شرکاء سے خطاب کرتے ہوئے قائدین مزدور یونین چوہدری محمد یٰسین ،اورنگزیب خان،راجہ شاکر زمان کیانی ،حاجی مشتاق احمد شاہد و دیگر نے کہا کہ سی ڈی اے میں پندرہ ہزار محنت کش ادارے و شہر کی ترقی کے لیے کام کر رہے ہیں جو اس وقت مشکل ترین حالات سے دوچار ہیں کیونکہ ہمارے ادارے و ملازمین کو تقسیم کرنے کی سازش میں ادارے میں موجود انتظامیہ کے ایجنٹ میر جعفر اور میر صادق کا کردار ادا کر رہے ہیں جبکہ سی ڈی اے مزدور یونین ادارے ک ؤی بقاء ،ملازمین کی تقسیم ،شعبہ صفائی کی نجکاری ،پلاٹوں کی الاٹمنٹ اور محنت کشوں کو ملنے والی مراعات کو تحفظ دینے کے لیے ایک طرف سڑکوں پر احتجاج کر رہی ہے تو دوسری طرف عدالتوں میں اپنی قانونی جنگ لڑرہی ہے سی ڈی اے محنت کشوں نے اسلام آباد جیسے دارلحکومت کو خوبصورت شہر بنایا آج جس میں بڑے بڑے سیاستدان ،جرنیل ،جج اور بیوروکریٹس محل نما گھروں میں رہنا پسند کرتے ہیں لیکن کوئی بھی میرے غریب محنت کش کو پانچ مرلے کا پلاٹ دینے کا حق میں نہیں ،انھوں نے کہا کہ ہم نئے شامل ہونے والے تمام دوستوں کے شکر گزار ہیں جن کی وجہ سے ہماری تنظیم مزید مضبوط ہوئی ،ہم یقین دلاتے ہیں کہ انشاء اللہ ریفرنڈم میں چوتھی بار کامیابی کے بعدسب سے پہلے بارہ کہو کی طرح بھنگالی شریف میں بھی ڈسپنسری کا قیام اسی مقام پر لایا جائے گا جو زمین مرزا سعید اختر نے عطیہ کی ہے اور ملازمین کے پلاٹوں کی الاٹمنٹ ،انکے بچوں کی بھرتی ،فیلڈ سٹاف کی سنیارٹی پر پروموشن اور ڈھڈیال و ترکوال تک سی ڈی اے بس روٹ بڑھایا جائے گا جسکی وجہ سے انفورسمنٹ ،انوائرمنٹ ،ایم پی او ،واٹر سپلائی اور چیئرمین آفس سمیت تمام ڈائریکٹوریٹس میں کام کرنے والے محنت کشوں کو دفاتر آنے میں آسانی ہو گی ، سی ڈی اے مزدور یونین اپنے محنت کش کے ووٹ کی طاقت پر یقین رکھتی ہے جبکہ ماضی میں بھی حکومت اور سیاسی جماعتوں نے ملکر ہمارا راستہ روکنے کی کوشش کی لیکن مسلسل تین مرتبہ سی ڈی اے محنت کش نے اپنا فیصلہ مزدور یونین کے حق میں دیا ،تقریب میں قائدین مزدور یونین سید نواز حسین شاہ ،سید سجاد حسین شاہ ،ملک محمود ،اصغر مغل ،عقیل شہزاد ،چوہدری آصف ،حاجی نوید عباسی ،فرخ عباس ڈوکہ ،چوہدری سجاد،شاہد مشتاق گلداور،ثاقب خان ،چوہدری حق نواز ،چوہدری قیصر سعید ،رانا عرفان ،اقرارحسین شاہ ،ملک رزاق ،احمد علی شیرازی ،چوہدری ناصرگجر ،محمد سرفراز ملک ،شاہد خان ،سردار آصف،شیخ جاوید ،محسن کیانی ،راجہ شعبان ،قدیر احمد ،ملک اکمل شہزاد ،مہر افتخار سیال ،عمر جھبانہ ،مسعود مغل ،ملک لطیف ،چوہدری منیر ،فیصل کھوکھر ،عامر شاہ گیلانی سمیت سینکڑوں ملازمین نے شرکت کی ۔

مزید : راولپنڈی صفحہ آخر