سستے مکانات کی تعمیر ومرمت کے لیے سود سے پاک قرضوں کی فراہمی،حکومت نے ’’اخوت ‘‘سے بڑا معاہدہ کر لیا

سستے مکانات کی تعمیر ومرمت کے لیے سود سے پاک قرضوں کی فراہمی،حکومت نے ...
سستے مکانات کی تعمیر ومرمت کے لیے سود سے پاک قرضوں کی فراہمی،حکومت نے ’’اخوت ‘‘سے بڑا معاہدہ کر لیا

  



اسلام آباد(ڈیلی پاکستان آن لائن)ملک میں سستے مکانات کی تعمیر ومرمت کے لیے سود سے پاک قرضوں کی فراہمی کے سلسلہ میں وزارت ہاؤسنگ اینڈ ورکس اور اخوت اسلامک مائیکروفنانس نےمعاہدے پر دستخط کردئیے،حکومت پاکستان میسرز اخوت کو ملک بھر میں چھوٹےقرضوں کی تقسیم کے لیے 5ارب روپے فراہم کرے گی۔معاہدے پر حکومت پاکستان کی طرف سے سیکرٹری ہاؤسنگ اینڈ ورکس ڈاکٹر عمران زیب خان جبکہ اخوت کی طرف سے چیف ایگزیکٹو افسر ڈاکٹر امجد ثاقب نے دستخط کیے۔

اُنہوں نے کہا کہموجودہ حکومت کا’’ نیاپاکستان ہاؤسنگ منصوبہ‘‘ ملک کا اہم ترین منصوبہ ہے،اِن قرضوں سے حکومت کے سستے مکانات کی فراہمی کے سلسلہ میں بڑی مدد ملےگی،حکومت نے سستے مکانات کی تعمیر وآرائش ومرمت کے لیے قرضوں کی فراہمی کے سلسلہ میں 5ارب روپے مختص کیے ہیں۔

میسرزاخوت اسلامک مائیکرو فنانس کا پیپراقواعدکے مطابق مسابقت کے بعد انقرضوں کی فراہمی کے لیے انتخاب کیا گیا ہے،اخوت کی طرف سے جو چھوٹے قرضے

دئیے جائیں گے وہ صرف غریبوں کو بغیر کسی سود کے دئیے جائیں گے اور انقرضوں کو نئے مکانات کی تعمیر کے علاوہ اضافی کمروں ، کچن اور باتھ روم سمیت گھر کی آرائش کے لیے استعمال کیا جائے گا اور قرضہ کی رقم 10لاکھروپے تک ہوگی۔اس قرضہ کی درخواست کی کوئی پراسیسنگ فیس نہیں ہوگی اور یہ قرضہ 24سے لیکر 60ماہانہ قسطوں میں واپس ادا کرنا ہوگا۔

مزید : قومی