11نومبرکو فروخت نے ہمارے جدید طریقوں کا بہترین مظاہرہ کیا‘ ایم ڈی دراز

11نومبرکو فروخت نے ہمارے جدید طریقوں کا بہترین مظاہرہ کیا‘ ایم ڈی دراز

  



لاہور(پ ر)ملک کی معروف آن لائن مارکیٹ پیلس ”دراز“ کے سیل ایونٹ 11.11 (گیارہ گیارہ) 2019ء نے پلیٹ فارم کا مکمل ماحولیاتی نظام لا کریہ ثابت کر دیا کہ پاکستان کی ای کامرس انڈسٹری میں بے پناہ ترقی کی صلاحیت موجود ہے۔ پچھلے ایک سال کے دوران دراز نے انتہائی تیار سیلرز، ڈلیوری ایجنٹس اور طاقتور لاجسٹک انفراسٹرکچر کو اس سال کے ایونٹ کی کامیابی کا سنگ بنیاد قرار دیا تھا۔دراز پاکستان کے منیجنگ ڈائریکٹر احسان سایہ نے کہا ”اِس گیارہ گیارہ (11.11) سیل ایونٹ نے ہمارے جدید طریقوں کا بہترین مظاہرہ کیا۔ پورا ماحولیاتی نظام واقعتا ایک ساتھ آیا اور ثابت کیا کہ پاکستان میں ای کامرس اگلے لیول کیلئے تیار ہے۔ نہ صرف ہمارے ویئر ہاؤسز نے ریکارڈ رفتار سے صارفین کے آرڈرز کو پورا کیا بلکہ سیلرز کی ایک بڑی تعداد نے بھی لاجسٹک انفراسٹرکچر کے ذریعے اپنے آرڈرز برق رفتاری کے ساتھ بھیجے جو ہم نے گزشتہ سال کی بلڈنگ میں صَرف کئے تھے۔ اس سے ہمارے کسٹمرز کو مطمئن کرنے اور بروقت اُن کے آرڈر موصول ہونے کو یقینی بنانے میں مدد ملی ہے۔“

دراز سیل ایونٹ گیارہ گیارہ 2019ء میں تقریباً 20,000سیلرز نے حصہ لیا اور انہیں آرڈر کی تکمیل کو یقینی بنانے کیلئے سیل کے دوران اعانت، تعلیم اور ایکٹو فالو اپ فراہم کی گئی۔ سیل کے پہلے دن دراز پروسیسنگ سنٹرز رات بھر کھلے رہے تاکہ سینکڑوں سیلرز ایڈجسٹ ہو جائیں جو پیکیج ڈراپ کرنے کیلئے باہر قطار میں کھڑے تھے۔ سیلرز کی زبردست ذمہ داری نے ترسیل کے وقت کی حدوں میں نمایاں اضافہ کیا۔

اِس سال کے ایونٹ میں نیا انسٹنٹ میسیج فیچر تھا جس نے کسٹمرز کو سیل کے دوران سیلر سے براہ راست بات چیت کرنے کا اہل بنایا۔ دراز ایپ پر سیلرز اور کسٹمرز کے درمیان مجموعی طور پر 3.5ملین مکالمہ ہوا۔

ادائیگی کے مختلف طریقہئ کار جو دراز اپنے کسٹمرز کو پیش کرتے ہیں وہ ڈیجیٹل ادائیگی کی طرف منتقلی میں معاون ثابت ہو رہی ہے۔ سیل کے دوران ایک ملین سے زائد دراز والیٹس کو چالو کیا گیا تھا اور 51فیصد سے زیادہ لین دین ڈیجیٹل ادائیگی کے طریقوں کے ذریعے کی گئی۔

دراز مال نے کسٹمرز کو رعایتی قیمتوں پر معروف برانڈز کی معیاری مصنوعات تک رسائی فراہم کی اور ایک ناقابل یقین جواب دیا، جس نے کل 11.11آرڈر شیئر میں سے 45فیصد حصہ لیا۔ 440سے زیادہ ٹاپ ریٹیڈ برانڈز نے سیل میں حصہ لیا اور 2018ء کے ایونٹ میں شریک برانڈز کی تعداد 3xسے زیادہ تھی۔

مزید : کامرس