سمگلنگ اور منی لانڈرنگ کے تدراک کیلئے ایئر پورٹس پر شناخت کا نیا نظام متعارف

سمگلنگ اور منی لانڈرنگ کے تدراک کیلئے ایئر پورٹس پر شناخت کا نیا نظام متعارف

  



اسلام آباد(مانیٹرنگ ڈیسک) فیڈرل بورڈ آف ریونیونے سمگلنگ اور منی لانڈرنگ کی روک تھام کیلئے ملک کے تمام ایئرپورٹس پر مسافروں کی شناخت کا نیا نظام متعارف کرا دیا ہے۔پاکستان کسٹمز نے ملک کے 7 ائیرپورٹس پر مسافروں کی شناخت کیلئے رسک مینجمنٹ نظام شروع کر دیا ہے۔ اس نظام کے تحت مسافروں کی پیشگی شناخت ممکن ہوگی۔اعلامیہ کے مطابق فنانشل ایکشن ٹاسک فورس ایکشن پلان کے لائحہ عمل کو مدنظر رکھتے ہوئے نیا نظام بنایا گیا ہے۔ اس نظام کی بدولت مسافروں، ڈرگ سمگلرز اور منی لانڈررز کو پکڑا جا سکے گا۔اس شناختی نظام کو امریکی کسٹمز کے ادارہ اور ورلڈ کسٹمز آرگنائزیشن کے تکنیکی تعاون سے متعارف کرایا گیا۔ نئے نظام کے تحت پاکستان آنے اور باہر جانے والے مسافروں کا شناختی پروفائل بھی تیار ہو جائے گا جس سے شناخت میں آسانی میسر آئے گی۔ چیئرمین ایف بی آر سید شبر زیدی نے نئے نظام کے متعارف ہونے پر کہا کہ اس نظام سے کسٹمز اہلکاروں کی ائیرپورٹس پر موجودگی کم ہو جائے گی اور مسافروں کی ائیر پورٹس پر شناخت کا عمل کم وقت میں ممکن ہو پائے گا۔چیئرمین ایف بی آر نے ممبر کسٹمز آپریشنز کو مزید ہدایات جاری کرتے ہوئے کہا ہے کہ تمام بارڈر ایجنسیز سے معلومات کے تبادلہ سے قبل کسٹمز اہلکاروں کیلئے مناسب ٹریننگ سیشن کا انعقاد کیا جائے۔

نیا نظام متعارف

مزید : صفحہ اول