جنوبی پنجاب:فوڈسیفٹی ٹیمو ں کی چیکنگ‘پاپڑ فیکٹری سمیت 6پوائنٹس سیل

    جنوبی پنجاب:فوڈسیفٹی ٹیمو ں کی چیکنگ‘پاپڑ فیکٹری سمیت 6پوائنٹس سیل

  



ملتان (سٹاف رپورٹر) ڈائریکٹر جنرل پنجاب فوڈ اتھارٹی کی ہدایت پر فوڈ سیفٹی ٹیموں نے جنوبی پنجاب کے مختلف اضلاع میں کارروائیاں کرتے ہوئے غیر معیاری،زائدالمیعاد اشیاء کی(بقیہ نمبر44صفحہ7پر)

فروخت اورصفائی کے ناقص انتظامات پر6فوڈ پوائنٹس کو سر بمہر کیا۔متعدد فوڈ پوائنٹس کو سابقہ ہدایات پر عمل نہ کر نے اور حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پر2لاکھ58ہزارکے جرمانے عائدکیے۔تفصیلات کے مطابق فوڈ سیفٹی ٹیموں نے ڈی جی خان میں کارروائی کرتے ہوئے سابقہ ہدایات پر عمل نہ کرنے،زائدالمیعاداشیاء کی فروخت، لائسنس نہ ہونے، مصالحہ جات میں کھلے رنگ کی ملاوٹ،ناقص صفائی پر ظہور عباس کریانہ اورراجن پور میں فوجی سلیم کریانہ سٹور کو سیل کردیا۔ ملتان میں چیکنگ کے دوران پاپڑ کی تیاری میں کھلے مصالحہ جات،رینسڈ آئل کے استعمال، جعلی لیبلنگ،ورکرز کے میڈیکل سرٹیفیکیٹ نہ ہونے، گندے اور بدبودار ماحول کی بناء پررفیق کچا پاپڑ فیکٹری جبکہ بہاولپور میں نور محل سنیکس کو سربمہر کیاگیا۔اسی طرح ایکسپائرڈ کافی کے استعمال،ورکرز کے میڈیکل سرٹیفیکیٹ نہ ہونے اورحشرات کی روک تھام کے نامناسب انتظا مات پرکافی شاپ کو سیل کیا۔مزید برآں خانیوال میں طلحہٰ نان شاپ کو چھپکلیوں کی موجودگی،ناقابل سراغ اجزاء کے استعمال، نان کی تیاری میں کنگھے کے استعمال اور ورکنگ ایریا میں سیگریٹ کے ٹکڑ وں کی موجودگی پر سربمہرکیا گیا۔علاوہ ازیں ملتان،لودھراں،خانیوال،بہاولپور،وہاڑی اور بہاولنگر میں چیکنگ کے دوران مختلف فوڈ پوائنٹس کو مضرصحت اشیاء کی فروخت،غیر معیاری سٹوریج اور صفائی کے ناقص انتظامات پر1لاکھ48ہزار500کے جرمانے عائد کیے۔ اسی طرح لیہ،راجن پور،رحیم یارخان اور گردونواح کی ٹیموں نے مختلف علاقوں میں پنجاب فوڈ اتھارٹی قوانین کی خلاف ورزیوں پر 109,500کے جرمانے عائد کیے گئے۔جنوبی پنجاب کے مختلف علاقوں میں کارروائیوں کے دوران بھاری مقدار میں غیر معیاری پاپڑ،رینسڈ آئل، زائدالمیعاد اشیاء اور مضر صحت خوراک کو موقع پر تلف کر دیا۔فوڈ سیفٹی ٹیموں نے متعدد فوڈ پوائنٹس کو حفظان صحت کے اصولوں کی خلاف ورزیوں پرحتمی نوٹسزبھی جاری کیے۔

سیل

مزید : ملتان صفحہ آخر