حاملہ خاتون اپنے 11 سالہ بچے سمیت شوہر کے ہاتھوں قتل لیکن پھر ان کی لاشوں کو کہاں دفنا دیا گیا؟ جان کر آپ کو بھی دکھ ہوگا

حاملہ خاتون اپنے 11 سالہ بچے سمیت شوہر کے ہاتھوں قتل لیکن پھر ان کی لاشوں کو ...
حاملہ خاتون اپنے 11 سالہ بچے سمیت شوہر کے ہاتھوں قتل لیکن پھر ان کی لاشوں کو کہاں دفنا دیا گیا؟ جان کر آپ کو بھی دکھ ہوگا

  



بہاولنگر (ویب ڈیسک) پنجاب کے شہر بہاول نگر میں حاملہ بیوی اور اس کے 11 سالہ بیٹے کو قتل کرنے پر پولیس نے مقتولہ کے شوہر اور اس کے بھائی کو گرفتار کر لیا۔پولیس نے ملزمان کے خلاف اس دہرے قتل کا مقدمہ بھی درج کر لیا ہے۔

پولیس کے مطابق دہرے قتل کا واقعہ بہاول نگر کے نواحی علاقے بستی مہاراں والی میں پیش آیا، جہاں کے رہائشی محمد علی نے آئے روز کے جھگڑوں سے تنگ آ کر اپنی اہلیہ اور 11 سالہ سوتیلے بیٹے کو گلا گھونٹ کر قتل کر دیا۔ملزم نے اپنے بھائی کی مدد سے دونوں کو قتل کرنے کے بعد ان کی لاشیں گھر کے صحن میں ہی گڑھا کھود کر دفن کر دیں۔

ملزمان کے اعترافِ جرم کے بعد ان کی نشاندہی پر لاشیں مکان کے صحن سے نکال لی گئی ہیں، جبکہ مقتول خاتون کے بھائی کی مدعیت میں مقدمہ درج کر کے لاشیں پوسٹ مارٹم کے لیے ہسپتال منتقل کر دی گئیں۔ملزمان کا کہنا ہے کہ مقتول خاتون اپنے سسرال سے الگ علیحدہ مکان میں رہنا چاہتی تھی، جس کے باعث میاں بیوی میں گزشتہ کئی روز سے جھگڑا چل رہا تھا۔واردات کے روز مقتول خاتون کا 11 سالہ سوتیلا بیٹا بھی اپنی ماں سے ملنے آیا تھا جو ان ظالم اور شقی القلب افراد کے ہاتھوں ماں کے ساتھ قتل ہو گیا۔

مزید : علاقائی /پنجاب /بہاول نگر