آرٹیکل 212تحریک انصاف کیلئے کس قدر خطرناک ثابت ہوسکتاہے ؟

آرٹیکل 212تحریک انصاف کیلئے کس قدر خطرناک ثابت ہوسکتاہے ؟
آرٹیکل 212تحریک انصاف کیلئے کس قدر خطرناک ثابت ہوسکتاہے ؟

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)سابق سیکرٹری الیکشن کمیشن کنور دلشاد نے کہاہے کہ آرٹیکل 212میں لکھا ہواہے کہ اگر الیکشن کمیشن سمجھتاہے کہ یہ پارٹی فارن فنڈنگ بیسڈ ہے تو وہ پارٹی کو کالعدم قرار دے سکتا ہے ۔

دنیا نیوز کے پروگرام ”نقطہ نظر“میں گفتگو کرتے ہوئے سابق سیکرٹری الیکشن کمیشن کنور دلشاد نے کہا کہ الیکشن کمیشن کی سکروٹنی کمیٹی فارن فنڈنگ کیس پر 18ماہ سے کام کررہی ہے اور اس پر سارا کام مکمل ہوچکاہے ۔

کنو رمحمد دلشاد کا کہتاتھا کہ آرٹیکل 212میں لکھا ہواہے کہ اگر الیکشن کمیشن سمجھتاہے کہ یہ پارٹی فارن فنڈنگ بیسڈ ہے تو وہ پارٹی کو کالعدم قرار دے سکتا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ جب سکروٹنی کمیٹی اپنی رپورٹ الیکشن کمیشن کو پیش کردے گی تو الیکشن کمیشن اس رپورٹ کی بنیاد پر فیصلہ کردے گا ۔

مزید : قومی