کوہ سلیمان:نئے سیاحتی مقامات کی تلاش، تین سائٹس عوام کیلئے اوپن 

       کوہ سلیمان:نئے سیاحتی مقامات کی تلاش، تین سائٹس عوام کیلئے اوپن 

  

ملتان (نیوز  رپورٹر)سیاحت کے فروغ کیلئے حکومت پنجاب کی طرف سے خصوصاً جنوبی پنجاب میں نئے سیاحتی مقامات کی تلاش اوریہاں ترقیاتی کاموں کے لیے کروڑوں کے فنڈز جاری کرکے ان کوتیزی سے مکمل کرنے کی طرف گامزن ہے۔ٹورازم ڈویلپمنٹ کارپوریشن آف پنجاب(ٹی ڈی سی پی)ڈیرہ غازی کے انچارج شیخ اعجاز ن میڈیاکوبتایا کہ کوہ سلیمان (بقیہ نمبر29صفحہ6پر)

کے علاقے میں سات نئی ٹورسٹ سائٹس ”پارک ویز“کے نام سے تیار کرکے عوام کے لیے کھولنے کا کام تکمیل کے آخری مراحل میں ہے۔ ان میں مبارکی ٹاپ، گلگٹی، بارتھی، مٹ چانڈیہ، ہک ہائی، اناری ٹاپ اور سنگھڑ شامل ہیں۔ان میں سے تین سائٹس کا ترقیاتی کام مکمل کرکے ان کو عوام کے لیے کھول دیاگیاہے جبکہ دیگر کو پی سی ون کے مطابق جون2021ء میں مکمل کرکے عوام کے لیے کھول دیا جائے گا۔ان سائٹس میں سے کچھ علاقوں میں سردیوں میں برف باری معمول ہے جبکہ یہ انتہائی سرسبز پہاڑی علاقے ہیں۔دریائے سندھ پر واقع ہیڈ تونسہ بیراج پرایک نیا اورجدید تفریحی مقام بنانے پر تیزی سے کام جاری ہے۔اس جگہ 120سے 160کنال کے رقبے پر جومحکمہ انہار سے ٹی ڈی سی پی کومنتقل کیاگیا ہے۔کشتی رانی کے لیے جیٹی کی تعمیر اعلی معیار کاریسٹورنٹ،دریا کے کنارے ٹف ٹائل لگا کر بیٹھنے کی سہولت اور دریا میں رنگ برنگی لائٹس پھینکنے کے علاوہ چلڈرن پلے لینڈ، کیمپ سائٹ، کمرشل زون ار دیگر سہولیات مہیا کی جارہی ہیں۔ اس کا ڈیزائن تیار ہوکر محکمہ بلڈنگ کے حوالے کیا جا چکا ہے تاکہ کام شروع ہوسکے۔ اس کے علاوہ یہ تجویز بھی ہے کہ کوٹ مٹھن میں دریائے سندھ میں موجودتاریخی جہاز”انڈس کوئین“ کوتونسہ لاکر اس کو رنگ وروغن اور نئے سرے سے مرمت کرکے عوام کی تفریح کے لیے کھول دیا جائے۔شیخ اعجاز نے بتایا کہ تونسہ بیراج کے قریب ایڈونچر کے شوقین حضرات کے لیے نائٹ اور گروپ سفاری کے لیے جدید طرز کے 40ٹینٹ بھی ٹی ڈی سی پی کو مہیا کردیئے گئے ہیعں۔ چھ یازیادہ افراد کے گروپ کے لیے ٹی ڈی سی پی ٹورگائیڈ،رہائش،کھانا اور سکیورٹی فراہم کرے گی۔ ٹی ڈی سی پی کے چیئرمین ڈاکٹرسہیل ظفرچیمہ نے بھی جمعہ کو اس جگہ جاری ترقیاتی کاموں کاجائزہ لیا۔اسی طرح 52کنال رقبہ پر واقع سخی سرور ریزارٹ کوجدید سہولیات سے آراستہ کرنے کے لیے ایک کروڑ روپے سے زائد کا ٹینڈرجاری ہوچکا ہے جبکہ جنوبی پنجاب کے مشہور سیاحتی مقام فورٹ منرو میں ٹی ڈی سی پی ہوٹل جوکہ 16کنال رقبہ پرمشتمل ہے، کے ترقیاتی کام بھی تیزی سے جاری ہیں۔ ٹی ڈی سی پی بہاولپور کے ٹورسٹ پروموشن ا?فیسر مصباح اسحاق نے بتایا کہ لال سوہانرا نیشنل پارک میں ٹی ڈی سی پی کے ریزارٹ میں جدید سہولیات کی فراہمی کا کام جاری ہے جو جلد ہی مکمل ہوجائے گا جس کے بعد یہاں زیادہ لوگوں کو قیام و طعام کی سہولت دستیاب ہوگی۔ دوسری طرف کورونا وباکی وجہ سے ٹورازم انڈسٹری کو بہت نقصان پہنچاہے۔ ٹی ڈی سی پی کی طر ف سے دریائے چناب پر ملتان کی طرف پلے لینڈ تیرتے ہوئے ریسٹورنٹ کامنصوبہ بنایاگیا تھا جو پھرفائلوں میں ہی دب گیا۔ اسی طرح فورٹ منرو میں چیئر لفٹ کا منصوبہ ہرسال بجٹ کا حصہ تو بنتا رہا لیکن عملاً اس پر کوئی کام نہ ہوسکا۔ بعدازاں یہ منصوبہ ٹی ڈی سی پی سے لے کر فورٹ منروڈویلپمنٹ اتھارٹی کو دے دیاگیا تاحال چیئر لفٹ نہیں لگ سکی۔اس کے علاوہ چولستان میں جیپ ریلی کے موقع پر آنے والے ہزاروں افراد کی مشکلات اورسیاحوں کوسہولت فراہم کرنے کے لیے ٹورسٹ ویلج کامنصوبہ بنایا گیاتھا۔ یہ منصوبہ بھی فائلوں کی نذر ہوگیا۔ اب قلعہ دراوڑ کے قریب ٹی ڈی سی پی ریزارٹ بنایا جارہاہے۔خطہ ملتان ہزاروں سال قدیمی تہذیت و ثقافت کا حامل دنیا کا دوسرا زندہ شہر ہے تاہم یہاں بھی سیاحت کے فروغ کے لیے کوئی بڑا منصوبہ نہیں بنایاگیا۔یہاں ڈبل ڈیکر بسیں چلانے کامنصوبہ تھا جو روڈ کلیئرنس نہ ملنے سے ختم کردیاگیا۔بعدازاں ٹی ڈی سی پی بہاولپور کو پانچ ڈبل ڈیکر بسیں دینے کا منصوبہ بنایاگیا جس میں سے دوبسیں بہاولپور پہنچ بھی گئی ہیں۔اسی طرح ملتان میں سال ہا سال سے بننے اورٹوٹنے والامنصوبہ ”ملتان میوزیم“بھی لاکھوں کے اخراجات کے بعد ابھی تک پھرنئی جگہ کی الاٹمنٹ کامنتظر ہے۔

اوپن

مزید :

ملتان صفحہ آخر -