کشمیرہندوستانی اٹوٹ انگ ہرگز نہیں، بھارت اقوامِ متحدہ کی قراردادوں کی روگردانی سے باز رہے :پاکستان

کشمیرہندوستانی اٹوٹ انگ ہرگز نہیں، بھارت اقوامِ متحدہ کی قراردادوں کی ...
کشمیرہندوستانی اٹوٹ انگ ہرگز نہیں، بھارت اقوامِ متحدہ کی قراردادوں کی روگردانی سے باز رہے :پاکستان

  


اسلام آباد ( مانیٹرنگ ڈیسک) پاکستان نے کشمیر کے بارے میں بھارتی کی مسلسل ہٹ دھرمی اور اٹوٹ انگ قراردینے کو اقوامِ متحدہ کی قراردادوں سے روگردانی قرادیا ہے ۔دفترِ خارجہ کے ترجمان  نے بھارتی خارجہ امور کے وزیر کے کشمیر کے بارے میں بیان پر اپنے ردعمل میں کہا کہ بھارت کو اقوام متحدہ کا رکن ہونے کے ناطے مسئلہ کشمیر پر سلامتی کونسل کی قراردادوں سے روگردانی نہیں کرنی چاہئے۔  پاکستان نے کہا ہے کہ پاکستان اور بھارت کے درمیان بنیادی مسئلہ کشمیر ہے جو کئی دہائیوں سے حل طلب ہے، بھارتی قیادت تسلسل کے ساتھ جموں و کشمیر کو اپنا اٹوٹ انگ قرار دے رہی ہےجبکہ حقائق اس کے برعکس ہیں۔  ترجمان نے بھارتی خارجہ امور کے وزیر کے کشمیر کے بارے میں بیان پر اپنے ردعمل میں کہا کہ بھارت کو اقوام متحدہ کا رکن ہونے کے ناطے مسئلہ کشمیر پر سلامتی کونسل کی قراردادوں سے روگردانی نہیں کرنی چاہئے۔ انہوں نے کہا کہ جامع مذاکراتی عمل میں مسئلہ کشمیر بنیادی نکتہ ہے اور اس مسئلہ کے حل سے ہی خطہ میں امن و سلامتی ممکن ہے۔ ترجمان نے کہا کہ پاکستان بھارت سے تعمیری، بامقصد اور نتیجہ خیز مذاکرات کا خواہش مند ہے، منفی پروپیگنڈہ سے گریز اور مثبت ماحول برقرار رکھنے کیلئے سنجیدہ کاوشوں کی ضرورت ہے۔ترجمان نے کہا کہ گو کہ دوطرفہ معاہدے ختم ہو سکتے ہیں لیکن اقوام متحدہ کی قراردادیں تبدیل نہیں ہو سکتیں۔ترجمان نے کہا کہ بھارت کی جانب سے مسئلہ کشمیر پر مسلسل ہٹ دھرمی غیر سود مند اور اس مسئلہ کے حل کیلئے کی جانے والی کوششوں کے راستے میں رکاوٹ ہے۔

مزید : قومی /اہم خبریں