شاہد خاقان کا ایل این جی معاہدہ پر حکومت کو مناظرے کا چیلنج

شاہد خاقان کا ایل این جی معاہدہ پر حکومت کو مناظرے کا چیلنج

  

اسلام آبا د (صباح نیوز) سابق وزیراعظم اور نو منتخب رکن قومی اسمبلی شاہد خاقان عباسی نے درآمدی گیس کے معاہدہ پر حکومت کو مناظرے کا چیلنج کردیا،ہمارے دور کی ایل این جی ڈیل دنیا میں سب سے سستی ہے اگر کسی نے مناظرہ کرنا ہے مجھ سے کر لے، میں غلط ثابت ہو جاؤں تو بے شک مجھے گرفتار کر لیں، ایل این جی کی ڈیل میں نے کی تھی اورمیں اسکا ذمہ دار ہوں، ایل این جی گیس نہ لاتے تو ملک کا بجلی کا مسئلہ حل نہ ہوتا، نیب قانون میں ترمیم پر تیار ہیں، ہمارے کیسوں کو نکال دیں ہم اپنے کیس بھگت لیں گے، نواز شریف جیل جانے کیلئے باہر سے پاکستان آئے تھے وہ پرویز مشرف کی طرح باہر چھپ کر نہیں بیٹھے رہے انہوں نے الزامات لگانے پر وزیر پیٹرولیم سے معافی مانگنے کا مطالبہ کردیا۔ گزشتہ روز ایک نجی ٹی وی کو انٹرویو دیتے ہوئے شاہد خاقان عباسی کا کہنا تھا عوام حکومت کے جھوٹے وعدوں کو پہچان چکے ہیں ۔ مہنگا ئی آسمان سے باتیں کر رہی ہے،حکومت نے احتساب کرنا ہے کرے الزامات نہ لگائے ،حکومت 50 لوگوں کے نام بتا دے ہم خود پیش کر د یں گے۔ عمران خان اپنے ارد گرد دیکھیں انہیں کرپٹ لوگ نظر آ جائیں گے۔ نیب کا قانون پرویز مشرف نے (ن) لیگ کو توڑنے کیلئے تین ہفتے میں بنایا تھا مگر آج مشرف خود اس قانون کا سامنا کرنے کیلئے تیار نہیں۔ نیب قانون میں ترمیم پر ہماری حکومت کے دور میں پی پی پی ا ور پی ٹی آ ئی سمیت تمام جماعتیں متفق تھیں تاہم بعد میں ترمیم پر انکار کر دیا۔

خاقان چیلنج

مزید :

صفحہ آخر -