اسرائیلی فوج کی فلسطینی خاتون کی اسیر بیٹوں سے ملاقات پر پابندی

اسرائیلی فوج کی فلسطینی خاتون کی اسیر بیٹوں سے ملاقات پر پابندی

  

جنین(صباح نیوز)قابض صہیونی حکام نے ایک فلسطینی خاتون اور اس کے دو بیٹوں کو صہیونی جیل میں قید دو بیٹوں ایھم اور عہد سے 2020 تک ملاقات سے روک دیا ہے۔مرکز(بقیہ نمبر48صفحہ12پر )

اطلاعات فلسطین کے مطابق غرب اردن کے شمالی شہرجنین کے کفردان قصبے کی رہائشی فواد کمنجی نے بتایا کہ اسرائیلی حکام کی طرف سے انہیں ایک نوٹس بھیجا گیا ہے جس میں کہا گیا ہے کہ ان کی اہلیہ اور دو بیٹے سنہ 2020 تک اپنے اسیر بیٹوں سے ملاقات نہیں کرسکتے۔خیال رہے کہ ایھم کمنجی بئر سبع جیل میں قید ہیں اور انہیں دو بار عمر قید کی سزا سنائی گئی جب کہ ان کے بھائی عہد کو 16 نومبر 2017 سے جلبوع جیل میں ڈالا گیا ہے۔فواد کمنجی نے انسانی حقوق کی عالمی تنظیموں سے مطالبہ کیا ہے کہ وہ اسرائیلی حکام کی طرف سے ان کے خاندان کے افراد کا اسیر بچوں سے ملاقات پرپابندی کانوٹس لیں اور ان کی اہلیہ اور بچوں کو اسیران سے ملنے کا حق دلوائیں۔

مزید :

ملتان صفحہ آخر -