چائنہ کے دورے پر گئے سینئرصحافیوں اور دانشوروں کی وطن واپسی

چائنہ کے دورے پر گئے سینئرصحافیوں اور دانشوروں کی وطن واپسی

  

لاہور(خصوصی رپورٹ)’’انڈرسٹینڈنگ چائنہ ‘‘ کے زیر اہتمام چائنہ کے پانچ روزہ دورے پر گیاسینیئر صحافیوں اور دانشوروں کا (بقیہ نمبر26صفحہ12پر )

وفد وطن واپس پہنچ گیا۔ پاکستانی وفد کو قیام کے دوران چینی حکام کی جانب سے غیر معمولی پروٹوکول دیا گیا۔پانچ روزہ دورے کے دوران وفد نے ترجمان چینی دفتر خارجہ، میڈیا انڈسٹری، ریلوے کنسٹرکشن ،بجلی بنانے والی کمپنی اور چین میں غربت کے خاتمے کیلئے کام کر نیوالے ادارے سمیت حکمران جماعت کے سر کردہ رہنماؤں سے ملاقاتیں کیں۔پاکستانی وفد کابیجنگ پہنچنے پر چینی حکام کی جانب سے پر تپاک استقبال کیا گیا۔چائنہ نیوز نیٹ ورک کے دورے پر چینی حکا م نے پاکستانی میڈیاانڈسٹری کے ساتھ جدید ٹیکنالو جی میں تعاون بارے دلچسپی کااظہار کیا۔وفد نے بجلی پید اکر نے والی بڑی چائنیز کمپنی کے دفاتر کا بھی دورہ کیا ۔جہاں کمپنی کے ہیڈ آف انٹرنیشنل ڈیپارٹمنٹ نے وفد کا استقبال کیا۔ چینی کمپنی نے آن لائن سسٹم کے ذریعے پاکستان سمیت دنیا کے 6 مختلف ممالک میں بجلی کے بڑے منصوبو ں پر جاری کام دکھایا ۔چائنہ میں قیام کے دوران پاکستانی صحافیوں کے وفد نے چینی سٹیٹ کونسل اورچائنا ریلوے کنسٹرکشن کارپوریشن کے دفاترکا بھی دورہ کیا۔ترجمان چینی دفتر خارجہ نے پاکستانی وفد کو سی پیک اور پاک چائنہ تعلقات بارے تفصیلی آگاہ کیا۔ چائنا ریلوے کنسٹرکشن کارپوریشن کے صدرفانگ لی گانگ نے کارپوریشن کے مرکزی دفتر میں وفد کا استقبال کیا۔ان کا کہنا تھا کہ پاکستان میں چائنا ریلوے کنسٹرکشن کارپوریشن کی آٹھ کمپنیاں کام کر رہی ہیں اور اسکی مجموعی سرمایہ کاری آٹھ ارب ڈالر سے بھی زائد ہے۔سی پیک منصوبوں میں کراچی سرکلر ریلوے اور ایم ایل ون جیسے بڑے منصوبوں میں کارپوریشن کے زیر اہتمام آٹھ ہزا ر افراد پر مشتمل عملہ کام کر رہا ہے جس میں 90 فیصد پاکستانی ہیں ۔وفد میں سینئر صحافی سہیل وڑائچ،ہارون الرشید،ارشاد عارف ،حبیب اکرم،سلیم بخاری اور شعیب بن عزیز ،نذیر لغاری،خوشنود علی خان،مجاہد بریلوی ،بیازد خان،عامر خان، ظفرالدین محمود اور منصور آفاق شامل تھے۔

صحافی

مزید :

ملتان صفحہ آخر -