برطانوی فوجی آج کل سعودی فوجیوں کو کیا کام کرنا سکھارہے ہیں؟ جان کر آپ کی حیرت کی بھی انتہا نہ رہے گی

برطانوی فوجی آج کل سعودی فوجیوں کو کیا کام کرنا سکھارہے ہیں؟ جان کر آپ کی ...
برطانوی فوجی آج کل سعودی فوجیوں کو کیا کام کرنا سکھارہے ہیں؟ جان کر آپ کی حیرت کی بھی انتہا نہ رہے گی

  

لندن(مانیٹرنگ ڈیسک)سعودی حکومت صحافی جمال خاشقجی کے قتل اور یمن میں عام شہریوں کی ہلاکتوں کے الزام جیسے تنازعات میں گھری ہے اور مختلف ممالک میں بعض حلقے اپنی حکومتوں سے سعودی حکومت کے ساتھ قطع تعلقی کا مطالبہ کر رہے ہیں۔ اب برطانیہ سے بھی سعودی عرب کے لیے ایسی ہی بری خبر آ گئی ہے۔ میل آن لائن کے مطابق برطانوی پیراٹروپرز سعودی فوج کو میزائل چلانا سکھا رہے ہیں۔ برطانیہ کے ایلیٹ سولجرز ، جن کا تعلق رائل انجینئرز اینڈ رائل لاجسٹک کورز سے ہے، سعودی فوجیوں کو 81ایم ایم مارٹر فائر کرنے کی تربیت دے رہے ہیں، جو ایک چھوٹا راکٹ سسٹم ہے اور تین میل کے فاصلے تک مار کر سکتا ہے۔اس کے علاوہ یہ سولجرز سعودی فوجیوں کو بارودی سرنگیں تلاش کرنے اورانہیں ناکارہ بنانے کی تربیت بھی دے رہے ہیں۔

رپورٹ کے مطابق صحافی جمال خاشقجی کے قتل کے بعد برطانوی کے سابق ڈویلپمنٹ سیکرٹری اینڈریو میچل نے مطالبہ کیا ہے کہ ان برطانوی فوجی ٹیموں کو سعودی فوج کے ساتھ کام کرنے سے روکا جائے۔اس میں کوئی شبہ نہیں کہ سعودی دفاعی معاملات میں برطانوی فوج کی شراکت انسانی حقوق کے تحفظ اور جنگی قوانین کی پاسداری کے حوالے سے بہترین ثابت ہو گی لیکن فی الوقت ایسی تمام سرگرمیاں فوری طور پر روک دینی چاہیے، جب تک جمال خاشقجی کے قتل کا معاملہ واضح نہیں ہو جاتا۔ہم تمام شعبوں میں سعودی عرب کو جو معاونت فراہم کر رہے ہیں ان میں شفافیت کی اس وقت جتنی ضرورت ہے، اس سے پہلے کبھی نہ تھی۔“

مزید :

برطانیہ -