آزادی مارچ، پولیس نے دو علما ء کو گرفتار کرلیا

آزادی مارچ، پولیس نے دو علما ء کو گرفتار کرلیا
آزادی مارچ، پولیس نے دو علما ء کو گرفتار کرلیا

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)جے یو آئی (ف)کے سربراہ مولانا فضل الرحمان کے دھرنے سے قبل پولیس نے گرفتاریوں کا سلسلہ شروع کر دیاہے،جمعیت علمائے اسلام (ف) کے دو علماء کو آزادی مارچ میں شرکت پر اکسانے کے الزام میں اسلام آباد سے گرفتار کرکے تھانہ شمس کالونی میں ان کے خلاف مقدمہ درج کرلیا گیا ہے ، دونوں افراد بینرز لگا رہے تھے ۔ 

نجی ٹی وی چینل کے مطابق پولیس نے آزادی مارچ کے حوالے سے بینر لگانے پر دو افراد کو گرفتار کر لیا اور دعویٰ کیا کہ  جے یو آئی (ف) کے رہنما مولانا شفیق الرحمٰن اور مولانا محمد ارشاد کو گرفتار کرکے ان کے پاس سے بینرز برآمد کیے گئے ہیں، ملزمان آزادی مارچ کے حوالے سے شہر میں بینر آویزاں کر رہے تھے ، بینر پر لکھی گئی تحریروں سے شہریوں کو آزادی مارچ کے حوالے سے اکسایا جا رہا تھا۔پولیس نے بتایا کہ ملزمان نے دفعہ 144کے باوجود حکومتی رٹ کو چیلنج کیاہے، ملزمان کےخلاف تھانہ شمس کالونی میں مقدمہ درج کیا گیا ہے جبکہ دو ملزمان شفیق الرحمان اور محمد ارشادکو گرفتار کیا گیا ہے،گرفتار ملزمان کے قبضے سے بینر بھی برآمد کر لئے گئے ہیں، پولیس کی جانب سے دیگر ملزمان کی گرفتاری کےلئے چھاپے مارے جا رہے ہیں۔

مزید : قومی /علاقائی /اسلام آباد