ملک تاریخ کے نازک ترین دور سے گزر رہا،کسی بھی سیاسی انتشار سے ملک اور جمہوریت کو بڑا نقصان پہنچ سکتا ہے:اسد قیصر

ملک تاریخ کے نازک ترین دور سے گزر رہا،کسی بھی سیاسی انتشار سے ملک اور جمہوریت ...
ملک تاریخ کے نازک ترین دور سے گزر رہا،کسی بھی سیاسی انتشار سے ملک اور جمہوریت کو بڑا نقصان پہنچ سکتا ہے:اسد قیصر

  



اسلام آباد (ڈیلی پاکستان آن لائن)سپیکر قومی اسمبلی اسدقیصر نے کہا کہ ملک تاریخ کے نازک ترین دور سے گزر رہا ہے،ملک اس وقت کسی بھی سیاسی افراتفری کا متحمل نہیں ہو سکتا، کسی بھی سیاسی انتشار سے ملک اور جمہوریت کو بڑا نقصان پہنچ سکتا ہے،27 اکتوبر کو دنیا بھر میں پاکستان کشمیری عوام کے ساتھ یوم سیاہ کے موقع پر یوم یکجہتی کے طور پر منائیں گے۔

صوابی میں بوائز وگرلز ڈگری کالج کےسنگ بنیاد کےموقع پر عوامی اجتماع سے خطاب کرتے ہوئےسپیکر اسد قیصر نے کہا کہ عوام سے کیے تمام وعدوں کو پورا کیا جائے گا،عوام کوسہولیات کی فراہمی تک چین سے نہیں بیٹھوں گا،جس طرح عوام نےمیراساتھ دیامیں بھی اسی جذبے اور نیت کے ساتھ صوابی کی عوام کی خدمت میں مصروف ہوں،موجودہ حکومت تعلیم کےمعیارکوبہتر بنانےاورتعلیمی اداروں کوسہولیات کی فراہمی کےلیےترجیحی بنیادوں پراقدامات اٹھارہی ہے،جس سے تعلیمی نظام میں جدت آئے گی، ملک کو معاشی چیلنجز کے ساتھ ساتھ دیگر مسائل نے گھرا ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ پاکستان تحریک انصاف نے جب حکومت سنبھالی تو ہمیں کمزور ترین معیشت ورثے میں ملی تھی،وزیراعظم عمران خان کے پائیدار اور عوام دوست فیصلوں کی بدولت ملک معاشی بحران پر قابو پا رہاہے،معیشت کی مضبوطی کے لیے کیے گے فیصلوں کے ثمرات عوام تک پہنچنے شروع ہو چکے ہیں۔سپیکر نے لائن کنٹرول پر بھارتی بلا اشتعال فائرنگ کی مذمت کرتے ہوئے کہا کہ بھارتی افواج کی پاکستانی شہری آبادی پر فائرنگ کی جتنی بھی مذمت کی جائے کم ہے،ہماری مسلح افواج نے بروقت اور دندان شکن جواب دیاجس پرافواج پاکستان تحسین کی مستحق ہیں۔انہوں نے کہا کہ بھارت مسلہ کشمیر کو طاقت کے زور سے دبا نہیں سکتا،78 دنوں سے محصور کشمیریوں کے جذبات ابھی بھی تازہ ہیں،  اقوام عالم کو کشمیری عوام کی حالت زارپرتوجہ دینے کی ضرورت ہے،27 اکتوبر کودنیا بھرمیں پاکستان کشمیری عوام کےساتھ یوم سیاہ کےموقع پریوم یکجہتی کے طور پر منائیں گے۔

مزید : قومی /علاقائی /خیبرپختون خواہ /صوابی