ملک کی معاشی صورت حال انتہائی خراب، حکومت مہنگائی کوکوئی مسئلہ سمجھنے کیلئے تیار نہیں: مفتاح اسماعیل 

ملک کی معاشی صورت حال انتہائی خراب، حکومت مہنگائی کوکوئی مسئلہ سمجھنے کیلئے ...

  

       کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان مسلم لیگ (ن) کے رہنما اور سابق وفاقی وزیر مفتاح اسماعیل نے کہا ہے کہ اس وقت ملک کی معاشی صورت حال انتہائی خراب ہے۔حکومت مہنگائی کو کوئی مسئلہ سمجھنے کے لیے تیار ہی نہیں ہے۔عمران خان کی حکومت میں ساڑھے 7 کروڑ شہری خط غربت کے نیچے زندگی گذاررہے ہیں۔ملک میں بلند ترین سطح پر پٹرول فروخت کیا جارہا ہے،ہم حکومت کوپٹرولیم مصنوعات پر اب مزید ایک روپے بھی اضافہ نہیں کرنے دیں گے۔ان خیالات کا اظہار انہوں نے بدھ کو مسلم لیگ ہاؤس کارساز میں پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کیا۔اس موقع پر سندھ کے سینئر نائب صدر علی اکبر گجر،سیکرٹری اطلاعات خواجہ طارق نذیر اور دیگر بھی موجود تھے۔مفتاح اسماعیل نے کہا کہ وفاقی حکومت برآمدات بڑھانے میں مکمل طور پر ناکام ہوئی ہے۔ملکی تاریخ میں سب سے زیادہ درآمدات کی جارہی ہے۔حکومت کو سمجھ ہی نہیں آرہا ہے کہ اس وقت مہنگائی سب سے بڑا مسئلہ ہے۔دنیا کے تمام ممالک کے مقابلے میں پاکستان میں سب سے زیادہ مہنگائی ہوئی ہے۔پاکستان میں تین ماہ میں خوراک کی قیمتوں میں 12فیصد اضافہ ہوا ہے۔مہنگائی گزشتہ سال 17 فیصد زیادہ ہوئی ہے۔انہوں نے کہا کہ پاکستان کی تاریخ میں بلند ترین سطح پر پیٹرول فروخت ہو رہا ہے۔آج پیٹرول کی قیمت 137 روپے لیٹر ہے اور اس میں مزید اضافے کا خدشہ ہے۔ملک کے معاشی حالات انتہائی خراب ہیں اور حکومت مصنوعات کی قیمتوں میں اضافہ کرکے عوام کو زندہ درگور کرنا چاہتی ہے۔انہوں نے کہا کہ احتجاج کرنا ہمارا حق ہے۔ہم اس نااہل حکومت کی پالیسیوں اور مہنگائی کے خلاف احتجاج کریں گے۔ہم پٹرولیم مصنوعات کی قیمتوں میں اب ایک روپے کا اضافہ بھی برداشت نہیں کریں گے۔مفتاح اسماعیل نے کہا کہ عمران خان نے جس شعبے میں بھی ہاتھ ڈالا ہے اس کا برا حال ہوا ہے۔بجلی مزید مہنگی ہونے جارہی ہے۔گیس کا بحران آنے والا ہے۔گیس 141فیصد مہنگی کی گئی ہے۔حکومت کی 5 گیس کمپنیاں ہیں۔انہوں نے کہا کہ عمران خان نے ریاست مدینہ کی بڑی بڑی باتیں کیں لیکن صورت حال یہ ہے کہ ان کی حکومت میں ساڑھے 7کروڑ شہری خط غربت سے نیچے زندگی گذارنے پر مجبور ہیں۔ہمارے دور میں یہ تعداد 5کروڑ تھی۔عمران خان حکومت نے ملکی تاریخ کا سب سے زیادہ قرضہ لیا ہے۔یہ ملک کپاس پر چلتا ہے لیکن اس کو بھی مہنگا کردیا گیا ہے۔نجانے کون ارسطو ہے جو ان کو یہ مشورہ دیتا ہے۔ایک سوال کے جواب میں مفتاح اسماعیل نے کہا کہ نواز شریف کے پاکستان آنے سے اگر مہنگائی کم ہوتی ہے تو میں نواز شریف سے کہتا ہوں کہ وہ پاکستان آجائیں۔

مفتاح اسمعیل 

مزید :

صفحہ اول -