لیاقت آباد اور گلبرگ میں بلڈر مافیا سرگرم، غیر قانونی تعمیرات جاری 

لیاقت آباد اور گلبرگ میں بلڈر مافیا سرگرم، غیر قانونی تعمیرات جاری 

  

         کراچی(رپورٹ/ندیم آرائیں)ڈسٹرکٹ سینٹرل کے علاقے لیاقت آباد اور گلبرگ میں سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے کرپٹ افسران کی سرپرستی میں بلڈر مافیا غیر قانونی تعمیرات بلا خوف و خطر کررہی ہے، علاقہ مکین پریشان، ڈسٹرکٹ سینٹرل  کے علاقے لیاقت آباد بی ایریا میں پلاٹ نمبر12/7،پلاٹ نمبر 11/6بی ایریا،پلاٹ نمبر 49/22 بی ایریا،پلاٹ نمبر 7/34بی ایریا،پلاٹ نمبر5/871لیاقت آباد نمبر5،پلاٹ نمبر5/872لیات آباد نمبر5،پلاٹ نمبر1197/14گلبرگ، 603/2گلبرگ،1306/2گلبرگ،1001/2گلبرگ،1002/2گلبرگ،1262/2گلبرگ،765/15گلبرگ پر بلڈرز مافیا دھڑلے سے غیر قانونی تعمیرات کررہے ہیں تفصیلات کے مطابق ڈسٹرکٹ سینٹرل کے علاقے لیاقت آباد  بی ایریا میں پلاٹ نمبر 22/49 پر بلڈر گراؤنڈ پلس فور کی غیر قانونی تعمیرات کررہا ہے جبکہ اس پلاٹ کو ایس بی سی اے نے 15 اکتوبر کو سندھ بلڈنگ اتھارٹی کے قوانین کی خلاف ورزی پر سربمہر کردیا تھا اسی طرح لیاقت آباد بی ایریا پلاٹ نمبر 11/6 پر بلڈر شاپس پلس فور کی غیر قانونی تعمیرات کررہا ہے جبکہ اس پلاٹ کی شاپس گزشتہ سال سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کی جانب سے منہدم کی گئی تھیں مگر اس کے چند ماہ بعد ہی شاپس دوبارہ تعمیر کرکے گراؤنڈ پلس 3 کی تعمیرات کردی گئیں اب بلڈر کی جانب سے چوتھافلور بھی تیزی سے تعمیر کیا جارہا ہے، مذکورہ پلاٹ کو ایک بار پھر سندھ بلڈنگ کنٹرول کے افسران کی جانب سے 15 اکتوبر کو سربمہر کیا گیا ہے  جبکہ سندھ بلڈنگ کنٹرول اتھارٹی کے افسران نے مذکورہ پلاٹ کے سیلنگ آرڈر پر دانستہ یا نادانستہ پلاٹ نمبر 11/6 کی بجائے 11/26 ٹائپ کردیا ہے، بلڈر نے غیر قانونی تعمیرات سربمہر ہونے کے باوجود کام جاری رکھا ہوا ہے،پلاٹ نمبر 34/7 بی ایریا لیاقت آباد پر بھی بلڈر 12 اکتوبر کو سندھ بلڈنگ اتھارٹی جانب سے غیر قانونی تعمیرات کی وجہ سے سربمہر کی گئی عمارت پر شاپس پلس گروؤنڈ پلس تھری کی غیر قانونی تعمیرات کررہا ہے، جبکہ پلاٹ نمبر 12 /7 پر بلڈر رہائشی علاقے میں پلاٹ کی جگہ سے تجاوز کرتے ہوئے غیر قانونی شاپس کی تعمیرات کررہا ہے،جبکہ لیاقت آباد نمبر5  میں پلاٹ نمبر 5/871 اور پلاٹ نمبر 5/871 پر سربمہر ہونے کے باوجود گراؤنڈ پلس 4 کی غیر قانونی تعمیرات جاری ہیں زرائع کے مطابق بلڈر نے سیلنگ آرڈر چسپاں ہونے کے دو روز بعد ہی پھاڑ دیے تھے،اسی طرح گلبرگ کے علاقے میں بھی پلاٹ نمبر 1197/14پر بلڈر گراؤنڈ پلس 2 پلس 4شاپسکی غیر قانونی تعمیرات، پلاٹ نمبر 603/2 گلبرگ  میں گراؤنڈ پلس تھری،پلاٹ نمبر 1306/2 گلبرگ میں گراؤنڈ پلس تھری،پلاٹ نمبر 1001/2 گلبرگ میں گراؤنڈ پلس 4,پلاٹ نمبر 1002/2گلبرگ میں گراؤنڈ پلس 4,،پلاٹ نمبر 1262/2گلبرگ میں گراؤنڈ پلس 3,پلاٹ نمبر 765/15 گلبرگ میں گراؤنڈ پلس 5 شاپس پلس 2, کی غیر قانونی تعمیرات کررہا ہے،علاقہ مکینوں کا اس ضمن میں کہنا ہے کہ ایس بی سی اے کے کرپٹ افسران غیر قانونی تعمیرات کے حوالے سے چند نوٹ  لے کر اپنی آنکھیں بند کرکے بلڈر مافیا کے ساتھ ملکر لاکھوں انسانی جانوں سے کھیلنے کا خطرناک کھیل رہے ہیں اس سے قبل بھی کئی قیمتی جانیں ان غیر قانونی تعمیرات کی نظر ہوچکی ہیں،ایسا لگتا ہے کہ ان کرپٹ افسران اور بلڈر مافیا کی اپنی اولادیں نہیں ہیں جو انہیں کسی کی اولاد کی جان کے ضیاع کا ذرا بھی افسوس نہیں ہوتا،علاقہ مکینوں نے روزنامہ پاکستان کے توسط سے وزیر اعظم پاکستان،چیف جسٹس آف سپریم کورٹ،آرمی چیف آف پاکستان، وفاقی اور سندھ حکومت کے متعلقہ وزراء  سے اپیل کرتے ہوئے کہا ہے کہ خدارا  شہر قائد باسیوں کو بنیادی حقوق دلانے میں اپنا اہم کردار ادا کریں اور کراچی  میں ہزاروں غیر قانونی تعمیرات کے خلاف موثر نوٹس لیتے ہوئے ان میں ملوث افسران اور بلڈرز کے خلاف کارروائی کرتے ہوئے غیر قانوی تعمیرات کوروکیں،

مزید :

پشاورصفحہ آخر -