” کشمیر ٹریڈرز فیڈریشن “کی طرف سے قابض انتظامیہ کی مذمت

” کشمیر ٹریڈرز فیڈریشن “کی طرف سے قابض انتظامیہ کی مذمت

  

سرینگر (اے پی پی) مقبوضہ کشمیر میں ” کشمیر ٹریڈرز فیڈریشن “نے سرینگر شہرکے بڑے بڑے کاروباری علاقوں سے سیلابی پانی کی نکاسی میں تاحال ناکامی پر قابض انتظامیہ کی سخت مذمت کی ہے۔ کشمیر میڈیا سروس کے مطابق ” کشمیر ٹریڈرز فیڈریشن “کے ترجمان اعجاز شاہدار نے سرینگر میں جاری ایک بیان میں کہا کہ قابض انتظامیہ لال چوک، ریگل چوک، کرن نگر، ہری سنگھ ہائی سٹریٹ اور سرینگر کے دیگر اہم کاروباری علاقوں سے پانی نکالنے میں ناکام ہو چکی ہے۔ انہوںنے کہا کہ قابض انتظامیہ اپنی ذمہ داری نباھنے میں قطعی طور پر ناکام ہوچکی ہے، دکانیں اور کاروباری مراکز بہت دنوں سے پانی میں ڈوبے ہوئے ہیںجسکی وجہ سے ان میں موجود اشیا برباد ہو چکی ہونگی۔ اعجاز شاہدارنے کہا کہ قابض انتظامیہ کم از کم سڑکیں ہی صاف کرے تاکہ کاروباری طبقے کے لوگ اپنی دکانوں تکپہنچ کر نقصانات کا اندازہ لگا سکیں۔

انہوںنے کہا کہ قابض انتظامیہ بلند بانگ دعوے کر رہی ہے کہ وہ بڑی تعداد میں پمپوں سے شہر سے پانی نکالنےکا کام کر رہی ہے لیکن عملی طور پر ایسا کچھ نہیںہے بلکہ چند ایک پمپوں کے ذریعے مخصوص علاقوں سے پانی نکالا جا رہا ہے۔ دریں اثناء” فیڈریشن چیمپر آف انڈسٹری “ کے ترجمان نے ایک بیان میں سیلاب کے باعث انسانی جانوں کے ضیاع پر شدید رنج و غم کا اظہارکیا ہے۔

مزید :

عالمی منظر -