ٹرانسپورٹروں کی عیدی مہم ،کرایوں میں 30فیصد اضافہ

ٹرانسپورٹروں کی عیدی مہم ،کرایوں میں 30فیصد اضافہ

لاہور( خبرنگار) عیدالاضحی قریب آتے ہی صوبائی دارالحکومت سے دیگر شہروں کو روزانہ ہونے والی اے سی اور نان اے سی گاڑیوں کے ٹرانسپورٹروں نے کرایوں میں 25 سے 30 فیصد اضافہ کردیا گیا ۔ یہ اضافہ ٹرانسپورٹروں نے غیر اعلانیہ طور پر کیا ہے، تاہم مانیٹرنگ کے لئے ڈی سی او لاہور تمام تر اعلانات کے باوجود تاحال کوئی ٹیم مقرر نہیں کر سکے ہیں جس پر ٹرانسپورٹروں کی من مانی عروج پر پہنچ گئی ہے اور اس حوالے سے محکمہ ٹرانسپورٹ نے کرایوں کی مانیٹرنگ کے حوالے سے کوئی نظام وضع کیا ہے اور محکمہ ٹرانسپورٹ اور ڈی سی او لاہور کی جانب سے کوئی کسی قسم کی ٹیم مقرر نہ کی جانے پر عیدالاضحی منانے کے لئے شہر سے دیگر شہروں کے لئے جانے والے پردیسیوں کا سلسلہ شروع ہوتے ہی لوٹ مار کا بازار گرم ہو گیا ہے اور اس میں لاری اڈہ لاہور اور دیگر مسافر اڈوں پر لوٹ مار نے عروج پکڑ لی ہے جس میں بالخصوص نان اے سی اور اے سی ٹرانسپورٹرز مبینہ طور پر 25 سے 30 فیصد اضافی کرائے وصول کر رہے ہیں۔ اس میں ضلعی حکومت سے کوئی کسی قسم کی کوئی منظوری بھی حاصل نہیں کی گئی ہے جس پر پردیسیوں کا کہنا ہے کہ حکومت کو چاہیے کہ وہ ٹرانسپورٹروں کی لوٹ مار اور من مانیاں کے خاتمہ کے لئے سپیشل ٹیمیں مقرر کی جائیں، جبکہ ٹرانسپورٹروں کے ذرائع کا کہنا ہے کہ اگلے ایک سے دو روز میں 20 سے 30 فیصد مزید کرائے بڑھائے جانے کا امکان ہے اور اس حوالے سے ٹرانسپورٹروں کا کہنا ہے کہ وہ اس حوالے سے آزاد ہیں اور عیدالاضحی پر کرائے نہیں بڑھائے گئے ہیں محض ایک غلط خبر ہے جبکہ ڈی سی او لاہور کیپٹن (ر) محمد عثمان کا کہنا ہے کہ عیدالاضحی پر کرائے نہیں بڑھانے دئیے جائیں گے اور اس حوالے سے سپیشل ٹیمیں تشکیل دے دی گئی ہیں اور عیدالاضحی پر اضافی کرائے وصول کرنے والے ٹرانسپورٹروں کے خلاف کارروائی کی جائے گی۔

مزید : میٹروپولیٹن 1