اڑھائی ہزار ڈاکٹروں کی تنخواہوں کی عدم ادائیگی باعث تشویش ہے ، خدیجہ فاروقی

اڑھائی ہزار ڈاکٹروں کی تنخواہوں کی عدم ادائیگی باعث تشویش ہے ، خدیجہ فاروقی

لاہور(جنرل رپورٹر) مسلم لیگ ق کی رکن صوبائی اسمبلی خدیجہ عمرفاروقی صدر پاکستان مسلم لیگ شعبہ خواتین پنجاب نے پنجاب میں 20سال سے ترقی سے محروم ڈاکٹروں کو ترقی کے بعد تنخواہوں کی عدم ادائیگی پر انتہائی تشویش کا اظہار کرتے ہوئے اسے حکومت کی بیڈ گورننس قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ اڑھائی ہزار مسیحاؤں کو تنخواہوں کی عدم ادائیگی کے باعث وہ اور ان کی فیملی مالی مشکلات کا شکار ہیں ۔انہوں نے کہا کہ بیوروکریسی کی ہٹ دھرمی کے باعث اڑھائی ہزار ڈاکٹروں کی تنخواہوں کی ادائیگی نہ ہونے سے 7500ڈاکٹروں کی ترقی رکنا حکومتی نااہلی کی انتہا ہے ۔خدیجہ فاروقی نے کہا کہ ڈاکٹر معاشرے کا ایک اہم حصہ ہیں اور وہ ہسپتالوں میں دن رات عوام کی خدمت کررہے ہیں ۔حکومت کی طرف سے20 سال بعد اگر ڈاکٹر وں کی ترقی کیلئے تخلیق کی گئی 10,200سیٹوں کے بعد اڑھائی ہزار ڈاکٹروں کواگلے گریڈ میں ترقی دے ہی دی گئی توانہیں فی الفور ترقی کے مطابق تنخواہوں کی ادائیگی کو یقینی بنایا جائے اور اس میں رکاوٹ ڈالنے والے محکمہ خزانہ کے بیورو کریٹوں کے خلاف کارروائی کی جائے اور ان کی تنخواہوں کو بھی روکنے کا حکم جاری کیا جائے تاکہ انہیں احساس ہو کہ اگر سرکاری ملازم کو تنخواہ نہ ملے تو انہیں کن پریشانیوں کا سامنا کرنا پڑتا ہے۔

مزید : میٹروپولیٹن 1