کاشتکاروں کیلئے 341ارب روپے کے زرعی پیکج کا اعلان خوش آئند ہے

کاشتکاروں کیلئے 341ارب روپے کے زرعی پیکج کا اعلان خوش آئند ہے

اسلام آباد (اے پی پی) وفاق ایوانہائے صنعت وتجارت( ایف پی سی سی آئی) کی قائمہ کمیٹی برائے زرعی پیداوار اور ہارٹی کلچر کے چیئرمین احمد جواد نے کہا ہے کہ وزیراعظم محمد نواز شریف کی جانب سے کاشتکاروں کیلئے 341ارب روپے کے زرعی پیکج کا اعلان خوش آئند ہے تاہم حکومت باقاعدہ قانون سازی کے ذریعہ ایگری کلچر پرائس کمیشن کا قیام یقینی بنائے۔ اتوارکو’’اے پی پی‘‘ کے ساتھ خصوصی گفتگوکرتے ہوئے احمد جواد نے کہا کہ کینو اورتازہ سبزیوں کے کاشتکاروں کیلئے خصوصی سبسڈی کی ضرورت ہے تاکہ ملکی برآمدات کو بڑھایاجاسکے۔ انہوں نے کہا کہ سبسڈی کی فراہمی سے مقامی کاشتکار عالمی مارکیٹوں میں دیگر برآمدکنندگان کے ساتھ بہتر مقابلہ کرسکیں گے۔ انہوں نے کہا کہ زرعی اخراجات میں کمی اور اجناس کے بہتر نرخ کے حوالہ سے کمیشن کا قیام وقت کی اہم ضرورت ہے تاکہ کاشتکار طبقہ کو اس کی محنت کا صحیح صلہ مل سکے۔ احمد جواد نے کہا کہ وزیراعظم نے زرعی پیداوار بڑھانے کیلئے عظیم کارنامہ سرانجام دیا ہے تاہم اس پر عملدرآمد میں نہایت احتیاط کی ضرورت ہے تاکہ اس کے فوائد سے استفادہ حاصل ہوسکے۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے بتایا کہ گذشتہ چند برسوں میں چاول اورکپاس کی پیداوارمیں کمی دیکھی گئی ہے تاہم توقع ہے کہ وزیراعظم کے اعلان کردہ پیکج سے زرعی پیداوارمیں اضافہ ہوگا۔

احمد جواد نے کہا کہ حکومت کی بروقت مداخلت سے زرعی شعبہ کی کارکردگی سے خاطرخواہ استفادہ میں بھی مدد ملے گی اور زرعی ترقی کے مطلوبہ اہداف کے حصول میں مدد ملے گی۔

مزید : کامرس