پیرامیڈیکل سٹاف اور ینگ ڈاکٹرز نے خواجہ سلمان رفیق پر انڈے برسادیے

پیرامیڈیکل سٹاف اور ینگ ڈاکٹرز نے خواجہ سلمان رفیق پر انڈے برسادیے
 پیرامیڈیکل سٹاف اور ینگ ڈاکٹرز نے خواجہ سلمان رفیق پر انڈے برسادیے

  

لاہور(مانیٹرنگ ڈیسک)پولیس نے برسائے ڈنڈے تو پیرامیڈیکل سٹاف نے بھی برسادیے انڈے۔ حال ہے یہ لاہور کے شیخ زید ہسپتال کا جہاں ینگ ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل سٹاف نے مشیرِ صحت خواجہ سلمان رفیق کو کیا بے حال۔

لاہور کے شیخ زید ہسپتال میں ینگ ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل سٹاف ہسپتال کو ٹرسٹ کے حوالے کرنے کے خلاف احتجاج کررہے تھے کہ پولیس نے مظاہرین پر لاٹھی چارج کردیااور بہت سے مظاہرین کو گرفتار کرلیا۔مظاہرین نے بھی بدلہ لینے کی ٹھان لی اور تقریب میں شرکت کیلئے آئے مشیرِ صحت خواجہ سلمان رفیق پر انڈے برسادیے۔ خواجہ سلمان رفیق اجلاس کے اختتام کے بعد لفٹ میں سوار ہونے لگے تو ان پر پیرامیڈیکل سٹاف اور ینگ ڈاکٹرز نے انڈوں کی برسات کردی۔ نشانہ درست نہ ہونے کی وجہ سے بہت سے انڈے اردگرد کی دیواروں اور لوگوں کو جالگے مگر ایک انڈہ مشیرِ صحت کے حصے میں بھی آہی گیا۔ سیکیورٹی اہلکار خواجہ سلمان رفیق کو کامیابی سے مظاہرین کے چنگل سے نکال کر لے گئے۔ مشیرِ صحت کا انڈوں سے استقبال کرنے کے بعد کسی بھی انضباطی کارروائی سے بچنے کیلئے ینگ ڈاکٹرز اور پیرامیڈیکل سٹاف کے احتجاجی مظاہرین غائب ہوگئے۔دوسری طرف خواجہ سلمان رفیق نے نجی ٹی وی 92 نیوز سے بات کرتے ہوئے کہا ہے کہ پیرامیڈکس کی آپس میں دھڑے بندی چل رہی ہے انڈے مارنے کے حوالے سے مجھے کچھ نہیں پتاڈاکٹرز کے اپنے معاملات بھی چل رہے ہوتے ہیںڈیپارٹمنٹ کے ساتھ بیٹھ کر بات کریں گے۔ انہوں نے کہا کہ اپنے ذاتی ایشوز کو اداروں کی نظرنہیں کرنا چاہیے جمہوریت کا اپنا حسن ہے لیکن آمریت میں آواز نہیں آتی۔برے سلوک کے باوجود مظاہرین کی پوری بات سنوں گا اور ان کے مسائل کے حل کی پوری کوشش کروں گا بعض مطالبات کو فوری ماننا ممکن نہیں ہوتاکچھ قوانین کی پابندی لازم ہوتی ہے۔ انہوں نے کہا کہ ڈاکٹروں اور پیرامیڈکس کو شکوہ ہم سے ہوتاہے برداشت مریضوں کو کرنا پڑتا ہے۔

مزید : لاہور