یورپ کے بعد امریکہ میں بھی مسلمانوں پر عرصہ حیات تنگ ہونے لگا،ایسا انکشاف کہ آپ بھی افسردہ ہوجائیں گے

یورپ کے بعد امریکہ میں بھی مسلمانوں پر عرصہ حیات تنگ ہونے لگا،ایسا انکشاف کہ ...
یورپ کے بعد امریکہ میں بھی مسلمانوں پر عرصہ حیات تنگ ہونے لگا،ایسا انکشاف کہ آپ بھی افسردہ ہوجائیں گے

  

نیویارک(مانیٹرنگ ڈیسک) دہشت گردی کے بڑھتے واقعات کے باعث یورپ کے بعد اب امریکہ میں بھی مسلمانوں پر عرصہ حیات تنگ ہونے لگا ہے۔ آپ کو یہ جان کر بہت دکھ ہو گا کہ ایک نئی تحقیق میں مسلمانوں کو امریکہ کا سب سے زیادہ ناپسندیدہ سماجی گروپ قرار دے دیا گیا ہے۔

العریبیہ کی رپورٹ کے مطابق یہ تحقیقاتی سروے امریکہ کی یونیورسٹی آف مینیسوٹا کے ماہرین عمرانیات نے 2014ءسے 2016ءکے درمیان کیا ہے جس میں انکشاف ہوا ہے کہ 45.5فیصد امریکی شہری مسلمانوں کو سب سے زیادہ ناپسند کرتے ہیں۔ 2006ءمیں اسی موضوع پر ہونے والے ایک سروے میں 26فیصد لوگوں نے مسلمانوں کو سب سے زیادہ ناپسند قرار دیا تھا۔ 10سال بعد یہ شرح لگ بھگ دوگنا ہو چکی ہے۔ برطانوی اخبار دی انڈیپنڈنٹ نے اپنی رپورٹ میں لکھا ہے کہ ”امریکہ کے کنزرویٹو سیاستدان مسلمانوں کے خلاف اس شدت سے مہم چلا رہے ہیں کہ اس وقت مسلمان امریکہ کی سب سے زیادہ ناپسندیدہ کمیونٹی قرار پا چکے ہیں۔

روسی صدر پیوٹن نے بڑی پابندی لگادی، اب کوئی بھی شہری انٹرنیٹ پر یہ شرمناک حرکت نہ کرسکے گا کیونکہ۔۔۔

اس سروے رپورٹ میں دوسرے نمبر پر امریکہ کے ملحد(منکرِ خدا) طبقے کو ناپسندیدہ ترین قرار دیا گیا ہے۔ سروے کے مطابق یہودیوں، لاطینی اور ایشیائی امریکیوں کے خلاف ناپسندیدگی میں بھی 10پوائنٹس کا اضافہ ہوا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -