وہ ایک شرمناک ویڈیو جس نے صدر پیوٹن کے ہوش اڑادئیے، روس میں ہنگامہ پربا ہوگیا

وہ ایک شرمناک ویڈیو جس نے صدر پیوٹن کے ہوش اڑادئیے، روس میں ہنگامہ پربا ہوگیا
وہ ایک شرمناک ویڈیو جس نے صدر پیوٹن کے ہوش اڑادئیے، روس میں ہنگامہ پربا ہوگیا

  

ماسکو (نیوز ڈیسک) روس میں اتوار کے روز منعقد ہونے والے انتخابات میں صدر ولادی میر پیوٹن کی متحدہ روس پارٹی نے شاندار فتح حاصل کی، لیکن پھر ایک ایسی ویڈیو سامنے آگئی کہ حکمران پارٹی کا سارا مزہ ہی کرکرا ہو کر رہ گیا۔

میل آن لائن کی رپورٹ کے مطابق یہ ویڈیو نامعلوم ذرائع سے انٹرنیٹ پر سامنے آئی ہے، جس میں ایک پولنگ سٹیشن کا منظر دکھائی دیتا ہے۔ ایک خاتون پولنگ اہلکار اپنی میز پر رکھے کاغذات کے نیچے سے بیلٹ پیپرز کی بڑی سی گٹھی نکالتی ہے اور اسے اپنی بائیں طرف رکھے بیلٹ باکس میں ڈال دیتی ہے ۔ اس دوران قریب دو مزید خواتین موجود ہیں لیکن ووٹ ڈالنے والا کوئی شخص نظر نہیں آرہا۔

ہوائی جہازوں کو فضامیں تباہ کرنے کیلئے داعش نے ایسا ’ہتھیار ‘بنالیا کہ سن کر امریکہ اور یورپ کی نیندیں اڑ جائیں گی

یہ ویڈیو سی سی ٹی وی کیمرے سے ریکارڈ کی گئی ہے اور اس کے سامنے آتے ہی اپوزیشن جماعتوں نے ہنگامہ برپا کردیا ہے ۔ اپوزیشن رہنماﺅں کا کہنا ہے کہ وہ پہلے ہی اس بات کی جانب توجہ دلارہے تھے کہ حکمران جماعت الیکشن جیتنے کے لئے بڑے پیمانے پر دھاندلی کررہی ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ اس ویڈیو کی صورت میں ثبوت سامنے آگئے ہیں کہ کس طرح حکمران جماعت نے جعلی ووٹوں سے ڈبے بھرے ہیں۔

گزشتہ روز 90 فیصد ووٹوں کی گنتی مکمل ہونے پر یہ نتائج سامنے آئے کہ متحدہ روس پارٹی 54.3 فیصد ووٹ حاصل کرکے اول نمبر پر تھی۔ ان نتائج کے مطابق حکمران جماعت روسی پارلیمنٹ کی 450میں سے 338 نشستیں جیتنے میں کامیاب رہی ہے۔ اگرچہ اپوزیشن جماعتوں کی جانب سے دھاندلی کے الزامات عائد کئے گئے ہیں اور الیکشن کو غیر منصفانہ قرار دیا گیا ہے تاہم روسی حکام کا کہنا ہے کہ الیکشن شفاف اور قانون کے مطابق ہوئے ہیں۔

مزید :

بین الاقوامی -