الہ آباد ، عطائیوں کی بھر مار شہری پریشانی میں مبتلا

الہ آباد ، عطائیوں کی بھر مار شہری پریشانی میں مبتلا

  

 الہ آباد(نامہ نگار)الہ آباد محکمہ ہیلتھ کی مبینہ ملی بھگت عطائی شہریوں کو لوٹنے لگے مگرمچھ عطائی منتھلی دیکر بری الذمہ ،فرسٹ ایڈ کلینک کیخلاف کاروائی کر کے اعلیٰ حکام کو سب اچھا کی رپورٹ پیش خادم اعلیٰ پنجاب نوٹس لے اہل علاقہ کا مطالبہ۔تفصیل کے مطابق الہ آباد اور درجنوں دیگر دیہاتوں میں محکمہ ہیلتھ اور ڈرگ انسپکٹر کی مبینہ ملی بھگت سے عطائیوں کو ایم بی بی ایس ڈاکٹرز کے اختیارات مل گئے شہری لوٹنے پر مجبور ،ایک ہی سرنج سے متعدد مریضوں کو آنجکشن لگانے سے شہری ہیپاٹائٹس جیسی موذی بیماریوں میں مبتلا ہونے لگے حکومت پنجاب کے عوام کو بہتر طبی سہولیات کے تمام دھوے دھرے کے دھرے رہ گئے ہیں ہیلتھ کیئر کمیشن تشکیل دینے کے لئے پنجاب حکومت نے کڑوڑوں روپے خرچ کیے لیکن محکمہ صحت عطائیت کو ختم کرنے میں بھری طرح ناکام رہا ہے۔

عطائی ڈاکٹراور نیم حکیموں نے کلینک کھول کر شہریوں کو زائدالمیعاد میڈیسن۔ممنوع ،سٹیرائیڈ،نشہ آور میڈیسن اور غیر معیاری ادویات دیکر قیمی انسانی جانوں سے کھیل رہے ہیں مگرمچھ عطائی مقررہ تاریخ سے قبل متعقلہ افراد کو منتھلی جمع کروا دیتے ہیں جس کی وجہ سے محکمہ صحت نے چپ سادھ لی ہے محکمہ صحت فرسٹ ایڈ کلینک کیخلاف کاروائی کر کے ڈسٹرکٹ انتظامیہ کی آنکھوں میں دھول جھونک رہے ہیں مقامی شہریوں نے خادم اعلیٰ پنجاب۔سیکرٹری ہیلتھ نوٹس لے ڈی سی او قصور سے مطالبہ کیا ہے اور مگرمچھ عطائیوں کیخلاف اپنی زیرنگرانی کاروائی کروائے۔

عطائی

مزید :

علاقائی -