الطاف حسین پر سنگین غداری مقدمہ قائم کیا جائے،خرم شیرزمان

الطاف حسین پر سنگین غداری مقدمہ قائم کیا جائے،خرم شیرزمان

  

کراچی (اسٹاف رپورٹر)پاکستان تحریک انصاف کراچی کے سینئر نائب صدر و رکن سندھ اسمبلی خرم شیر زمان نے کہا ہے کہ 22اگست 2016 ؁ ء کو پاکستان مخالف نعرے لگانا اور عوام کو ریاست کے خلاف بغاوت پر اکسانا اور میڈیا ہاؤسز پر حملے کروانے کے جرم میں متحدہ قومی موومنٹ کے بانی و قائد الطاف حسین کے خلاف آئین کے آٹیکل 6کے تحت سنگین غداری کا مقدمہ قائم کر کے قانونی کاروائی کی جائے ۔الطاف حسین نے پاک فوج اور ریاست پاکستان کے خلاف بیانا ت اور ’’را‘‘ سے مدد مانگنا در اصل پاکستان کی اساس اور سا لمیت پر حملہ تھا ۔یہ باتیں انہوں نے گزشتہ روز سیکریٹری سند ھ اسمبلی کو ایم کیو ایم کے بانی الطاف حسین کے خلاف قرارداد جمع کروانے کے بعدصحافیوں سے گفتگو کرتے ہوئے کہیں۔ خرم شیر زمان نے مزید کہا کہ الطاف حسین کا یہ عمل پاکستان کے آئین و قانون کے تحت سنگین غداری کے زمرے میں آتا ہے۔ ہم پاکستان مخالف تقاریر ، میڈیا ہاؤسز پر حملے کی شدید مذمت کرتے ہیں اوروفاقی حکومت سے مطالبہ کرتے ہیں کہ الطاف حسین اور اس کی معاونت کرنے والے اشخاص کے خلاف بھی غداری کا مقدمہ درج کیاجائے۔انہوں نے مزید کہا کہ بدھ سے سندھ اسمبلی کاسیشن شروع ہو رہا ہے اور دیکھنا یہ ہے کہ کون کون سی سیاسی جماعتیں اسمبلی کے فلور پر تحریک انصاف کی اس قرارداد کی حمایت کرتے ہیں ۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہا کہ ایم کیو ایم پاکستان کے لئے بھی اس قرارداد کی حمایت کرنا ایک امتحان ہوگاکیونکہ ایم کیو ایم پاکستان اپنے آپ کو الطاف حسین سے الگ سمجھتے ہیں ۔ اگر ایم کیو ایم محب وطن ہے تو انہیں اس قرار داد کی بھرپور حمایت کرنی چاہئے تاکہ دودھ کا دودھ اور پانی کا پانی ہوجائے۔

مزید :

راولپنڈی صفحہ آخر -