مجھے سوات آپریشن کی اجازت دینے کی سزادی گئی ، افتخار چودھری نے مجھے ہٹایا پھر بھی بیٹی کی شادی میں گیا : یوسف رضا گیلانی

مجھے سوات آپریشن کی اجازت دینے کی سزادی گئی ، افتخار چودھری نے مجھے ہٹایا پھر ...
مجھے سوات آپریشن کی اجازت دینے کی سزادی گئی ، افتخار چودھری نے مجھے ہٹایا پھر بھی بیٹی کی شادی میں گیا : یوسف رضا گیلانی

  

اسلام آباد (مانیٹرنگ ڈیسک ) سابق وزیر اعظم سید یوسف رضا گیلانی نے کہا ہے کہ مجھے سوات آپریشن کی اجازت دینے کی سزا دی گئی ، افتخار چودھری نے مجھے ہٹایا مگر اس کے باوجود انکی بیٹی کی شادی میں شرکت کی ۔”اختیارات پارلیمنٹ کو دیے مگر چیف جسٹس نے سمجھا اختیارات انکے پاس چلے گئے ہیں ۔

اسلام آباد میں امن کے عالمی دن کے حوالے سے ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انکا کہنا تھا کہ پاکستان نے امن کیلئے بیش بہا قربانیاں دی ہیں ، ایک مضبوط اور مستحکم پاکستان ہی ایشیاءکے مفاد میں ہے ۔”پاکستان امن کا خواہشمند ملک ہے “۔امن کا پیغام دینے پر ملالہ یوسفزئی کو امن کا ایوارڈ دیا گیا ۔

روزنامہ پاکستان کی اینڈرائڈ موبائل ایپ ڈاؤن لوڈ کرنے کیلئے یہاں کلک کریں

یوسف رضا گیلانی نے کہا کہ میرے دور حکومت میں کوئی سیاسی قیدی نہیں تھا تاہم ملک میں بہتر نظام کیلئے آئین کی بالادستی اور انصاف کو عام کرنا ہو گا۔ انکا کہنا تھا کہ کشمیر کی صورت حال دیکھ کر دکھ اور درد محسوس کرتا ہوں ۔

مزید :

قومی -