بھارتی وزیر دفاع منوہر پاریکر نے ’’اڑی حملے ‘‘ میں اپنی غلطی تسلیم کر لی

بھارتی وزیر دفاع منوہر پاریکر نے ’’اڑی حملے ‘‘ میں اپنی غلطی تسلیم کر لی
بھارتی وزیر دفاع منوہر پاریکر نے ’’اڑی حملے ‘‘ میں اپنی غلطی تسلیم کر لی

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک)بھارتی وزیر دفاع منوہر پاریکر نے تسلیم کیا ہے کہ مقبوضہ کشمیر میں ہندوستانی فوج کے ہیڈ کوارٹر پر ہونے والے حملے میں کچھ نہ کچھ ’’غلط ‘‘ ضرور ہوا ہے تاہم منوہر پاریکر کا یہ بھی کہنا تھا کہ وہ ایسے اقدامات ضرور اٹھائیں گے جس سے اس طرح کا واقعہ دوبارہ نہ ہو ۔

بھارتی نجی چینل’’این ڈی ٹی وی ‘‘ کے مطابق ہندوستانی وزیر دفاع منوہر پاریکر کا کہنا تھا کہ ’’اڑی سیکٹر ‘‘ پر ہونے والے حملے میں ہم سے یقینی طور پر کچھ نہ کچھ غلطی ہوئی ہے ،یہ غلطی کہاں اور کیا ہوئی ؟میں اس کی تفصیل میں نہیں جاؤں گا کیونکہ یہ انتہائی حساس معاملہ ہے ۔انہوں نے کہا کہ جب کوئی غلطی ہوتی ہے تو آپ اس کو ٹھیک کرنے کی کوشش کرتے اور اس اَمر کو یقینی بناتے ہیں کہ اس طرح کا واقعہ دوبارہ نہ ہو ۔

مزید پڑھیں:بھارت کے معروف ٹی وی نے بھارتی فوج کا’’ کچا چٹھا‘‘کھول کے رکھ دیا ،مقبوضہ کشمیر میں فوجی کیمپ پر ہونے والے حملے بارے ایسے سوالات اٹھا دیئے کہ بھارتی فوج ہی مشکوک ٹھہر گئی

منوہر پاریکر کا کہنا تھا کہ ہم یقینی طور پر اس کی چھان بین کریں گے کہ کیا اور کہاں خامی رہ گئی اور ایسے اقدامات بھی اٹھائے جائیں گے تاکہ ایسا دوبارہ نہ ہو۔انہوں نے کہا کہ میری زندگی میں غلطی کی گنجائش صفر اور 100فیصد کارکردگی پر یقین رکھتا ہوں ،بھارتی شہریوں کو یقین رکھنا چاہئے کہ ایسے واقعات دوبارہ نہیں ہوں گے ۔اڑی سیکٹر پر ہونے والے حملے کے جواب میں پوچھے جانے والے سوال پر منوہر پاریکر کا کہنا تھا کہ اگر اس کی ضرورت ہو گی تو میں بلا جھجھک اس پر رد عمل دوں گا،کس قسم کی جوابی کاروائی کرنی ہے ؟اس پر بات ہو رہی ہے ۔انہوں نے کہا کہ بھارتی وزیر اعظم نریندر مودی کا یہ بیان کہ ’’اڑی سیکٹر پر حملہ کے قصور واروں کو نہیں بخشا جائے گا ‘‘ یہ صرف بیان نہیں رہے گا ،حکومت اس پر پوری طرح سنجیدہ ہے ۔

مزید :

بین الاقوامی -اہم خبریں -