کربلا دو گروہوں کے مابین معرکہ نہیں،حق اور باطل کی جنگ تھی،اعجاز ہاشمی

کربلا دو گروہوں کے مابین معرکہ نہیں،حق اور باطل کی جنگ تھی،اعجاز ہاشمی

لاہور (سٹی رپورٹر) جمعیت علما پاکستان کے مرکزی صدر اور متحدہ مجلس عمل کے نائب صدر پیر اعجاز احمد ہاشمی نے کہا ہے کہ اسلام کا تحفظ نواسہ رسول حضرت امام حسین علیہ السلام کی عظیم قربانی کی مرہون منت ہے، جنہوں نے یزیدی قوتوں کے خلاف قیام کرکے شریعت محمد ی کا دفاع کیا۔ ورنہ ہم سے اسلام صحیح حالت میں نہ پہنچ سکتا۔ امام عالی مقام کی طرف سے یزیدی حکومت کے خلاف قیام اور مشکلات کے باوجودحق پرڈٹ جانے کا عمل آج ہمارے سیاستدانوں کے لئے مشعل راہ ہے ۔ عاشورہ محرم الحرام پراپنے پیٖغام میں پیر اعجازہاشمی نے کہا کہ کربلا دوافراد یا گروہوں کے درمیان معرکہ نہیں، یہ حق و باطل کی جنگ ہے۔ جس میں خون دے کراور بظاہر قربان ہوکر بھی حق فتح یاب ہوا۔ انہوں نے کہا کہ شہادت وقار اور راہ حق ہے۔ آج یزیدکی قبر پر چراغ جلانے والا اس کا نام لیوا کوئی نہیں۔ جبکہ روضہ حضرت امام حسین علیہ السلام پر عقیدت مندوں کی حاضری دن رات جاری رہتی ہے۔ جس سے پتہ چلتا ہے کہ انسان کے مرنے کے باوجود کردار نہیں مرتا، وہ زندہ رہتا ہے۔ آج کر بلا اتحاد کا درس دیتی ہے۔ کہ یزیدی قوتوں کے خلاف امت سیسہ پلائی دیوار بن کر کھڑی ہوجائے۔ باہمی فروعی اختلافات کو چھوڑ کر قرآن مجید سے رہنمائی لیں۔

مزید : میٹروپولیٹن 1