”اگر حوثی باغیوں نے سعودی عرب پر حملہ کیا تو ہم ۔۔۔“ عمران خان نے سعودی عرب کے حوالے سے سب سے بڑا اعلان کر دیا

”اگر حوثی باغیوں نے سعودی عرب پر حملہ کیا تو ہم ۔۔۔“ عمران خان نے سعودی عرب ...
”اگر حوثی باغیوں نے سعودی عرب پر حملہ کیا تو ہم ۔۔۔“ عمران خان نے سعودی عرب کے حوالے سے سب سے بڑا اعلان کر دیا

  

ریاض (ڈیلی پاکستان آن لائن )وزیراعظم عمران خان نے کہا ہے کہ ہم سعودی عرب پر کسی قسم کا حملہ برداشت نہیں کریں گے یمن تنازع کو ختم کرانے کے لیے پاکستان کردار ادا کرنے کے لیے تیار ہے۔

سعودی اخبار کو انٹرویو دیتے ہوئے وزیر اعظم عمران خان کا کہنا تھا کہ ہر تنازع کا سیاسی حل ہوتا ہے اور میں فوجی حل پر یقین نہیں رکھتا، اس لیے سعودی عرب اور یمن میں تنازع ختم کرانے کے لیے پاکستان کردار ادا کرنے کو تیار ہے لیکن ہم حوثیوں کے حملوں کے مقابلے میں سعودی عرب کا ساتھ دیں گے۔

وزیر اعظم نے کہا کہ افغانستان اور بھارت کے ساتھ اچھے تعلقات قائم کرنا چاہتے ہیں جو باہمی اعتماد پر مبنی ہو، ایران پڑوسی ہے، یقیناً تمام پڑوسیوں کے ساتھ اچھے تعلقات ہونے چاہئیں۔عمران خان نے کہا کہ سعودی عرب کو محفوظ اور خوشحال دیکھنا چاہتے ہیں، سعودی عرب نے ہمیشہ فراخدلی سے پاکستان کی مدد کی ہے، سعودی عرب سے ہمارا خصوصی تعلق ہے اس لیے ہمیشہ سعودی عرب کے ساتھ کھڑے ہوں گے کیونکہ اس نے ہر برے وقت میں ہمارا ساتھ دیا ہے

ان کا مزید کہنا تھا کہ ریاستی اداروں کو مضبوط کریں گے، کوئی شخص اداروں سے بالاتر نہیں ہوگا، پاکستان میں طرز حکمرانی اور لوگوں کا مائنڈ سیٹ تبدیل کریں گے، چین کی طرح پسماندہ طبقے کو اوپر لائیں گے اور انفرا اسٹرکچر کی بجائے رقم عوام پر خرچ کریں گے۔

مزید : قومی