بلوچستان کے کپتان سمیع اسلم ٹی 20کپ سے دستبردار

بلوچستان کے کپتان سمیع اسلم ٹی 20کپ سے دستبردار

  

لاہور(سپورٹس رپورٹر)رواں ماہ کے آخر میں شروع ہونے والے نیشنل ٹی ٹونٹی کپ میں ٹیموں کی سلیکشن پر سوالیہ نشان لگ گیا جب پلیئرز کی جانب سے شدید تحفظات کے اظہار کے بعد بلوچستان کے سیکنڈ الیون کپتان سمیع اسلم بھی ذاتی وجوہات کے تحت ایونٹ سے دستبردار ہو گئے۔وہ سلمان بٹ،رمیز راجہ جونیئر اور محمد عرفان جونیئر کے بعد چوتھے کھلاڑی ہیں جنہوں نے سیزن کے افتتاحی ایونٹ سے کنارہ کشی اختیار کی ہے۔ بلوچستان کی ٹیم انتظامیہ نے سمیع اسلم کی درخواست قبول کرتے ہوئے ان کی جگہ 29 سالہ بیٹسمین عظیم گھمن کو سکواڈ میں شامل کرلیا ہے۔ اگرچہ پی سی بی کا موقف ہے کہ بائیں ہاتھ کے بیٹسمین نے اپنی والدہ کی بیماری کے باعث ایونٹ سے علیحدگی اختیار کی ہے جو رواں سیزن کے دوران قائد اعظم ٹرافی میں شرکت کریں گے لیکن ذرائع کا دعویٰ ہے کہ سمیع اسلم نے سیکنڈ الیون میں تنزلی کے باعث بطور احتجاج دستبرداری ظاہر کی ہے۔

ور یہ واقعہ محمد عرفان جونیئر کے انتہائی اقدام کے چوبیس گھنٹے کے اندر پیش آیا ہے جنہوں نے جنوبی پنجاب کی سیکنڈ الیون میں انتخاب پر کھیل سے علیحدگی کا اعلان کردیا تھا۔ ان تمام واقعات میں ٹیموں کے کوچز کو سوشل میڈیا پر مورد الزام ٹھہرایا جا رہا ہے۔ 

مزید :

کھیل اور کھلاڑی -