ماڈل کالونی، پولیس گشت نہ ہونے کی وجہ سے ڈکیت سرگرم 

  ماڈل کالونی، پولیس گشت نہ ہونے کی وجہ سے ڈکیت سرگرم 

  

 کراچی (رپورٹ/ تجمل حسین  ہاشمی) ماڈل کالونی کی عوام چوروں ڈکیتوں کے رحم و کرم پر پولیس کا کردار خاموش  آئی جی سندھ اور ایڈیشنل آئی جی ماڈل کالونی میں بڑھتی ہوئی وارداتوں کا نوٹس لیں۔ تفصیلات کے مطابق ماڈل کالونی میں ڈکیتوں کا راج قائم ہوگیا عوام گھروں کے دروازوں پر لٹنے لگے ماڈل کالونی کے علاقے میں پولیس نے گشت کرنا ہی چھوڑدیا جب سے  ماڈل کالونی تھانہ کی شفٹنگ اور پھر ڈسٹرکٹ کورنگی میں ماڈل پولیس اسٹیشن کا قیام عمل میں آیا اس دن کے بعد سے ماڈل کالونی سعود آباد میں ضم ہوگیا، ماڈل پولیس اسٹیشن دور ہونے اور سڑکوں کی خستہ حالت،گٹروں کی ابلتی حالت کی  وجہ سے ماڈل کالونی میں پولیس کا گشت مکمل طور پر ختم ہوگیا جس سے اسٹریٹ کرمنلز فائدہ اٹھا رہے ہیں اور عوام کو قیمتی موبائل فونز اور نقدی سے محروم کررہے ہیں ماڈل کالونی کے علاقہ معززین نے بتایا کہ  پہلے چوری ڈکیتی کی وارداتیں کم ہوا کرتی تھی اب تو دن میں کئی افراد ان ڈکیتوں کا نشانہ بن کر اپنا موبائل فونز اور نقد رقم سے محروم ہوجاتے ہیں ایس ایس پی کورنگی فیصل عبداللہ چاچڑ کو چاہئیے کہ ماڈل کالونی کی عوام کے لیے کوئی بہتر فیصلہ کریں تاکہ  ان ڈکیتوں سے عوام کو چھٹکارا دلایا جائے علاقہ معززین نے آئی جی سندھ مشتاق مہر اور ایڈیشنل آئی جی غلام نبی میمن سے بھی درخواست کی ہے کہ ماڈل کالونی میں پولیس کے گشت کو بڑھا کر ڈکیتوں کا خاتمہ کرنے میں اپنا اہم کردار ادا کریں  اور ماڈل کالونی کے تھانہ کو واپس علاقہ میں شفٹ کیا جائے

مزید :

صفحہ آخر -