ناموس رسالت اور ناموس صحابہ پر حملے ناقابل برداشت ہیں، علماء کرام

 ناموس رسالت اور ناموس صحابہ پر حملے ناقابل برداشت ہیں، علماء کرام

  

لاہور(نمائندہ خصوصی)عالمی مجلس تحفظ ختم نبوت کے مرکزی رہنما مولانا عزیز الرحمن ثانی، مبلغ ختم نبوت لاہور مولانا عبدالنعیم، پیررضوان نفیس، مولانا سید عبدللہ شاہ نے ختم نبوت اجتماع سے خطاب کرتے کہا ہے کہ ناموس رسالت اور ناموس صحابہ پر حملے ناقابل برداشت ہیں۔ قادیانیوں کے خلاف بنائے گئے قوانین میں ترمیم کی کوئی کوشش برداشت نہیں کی جائے گی اور اگر حکومت نے ایسا کیا توقادیانیوں کے خلاف 1974 سے بھی زیادہ شدت سے احتجاجی تحریک چلائی جائے گی۔

 قادیانی اسلام کا ٹائٹل لگا کر اپنی غیر اسلامی حرکتوں کو جاری رکھے ہوئے ہیں۔دینی قوتوں کو متحدہو کر اسلام دشمنوں کا مقابلہ کرنا ہو گا۔موجودہ حکومت کی صفوں میں فرقہ پرست عناصر اعلی مناصب پر فائز ہیں جن کی سرگرمیوں پر تشویش ہے۔ ملک میں ایک عرصہ بعد امن کی فضا قائم ہوئی ہے جو ملک دشمن عناصر کو پسند نہیں۔ مذہبی منافرت کو پھیلانے کے لیے مقدس ہستیوں کی ناموس پر حملے کرائے گئے ا مت مسلمہ کو اس وقت اتفاق و اتحاد کی اشد ضرورت ہے تاکہ مسلم امہ اپنے مسائل کو خود حل کرسکے۔ صحابہ کرام سے محبت ہمارے ایمان کا حصہ ہے۔ صحابہ کا احترام ہم سب پر لازم ہے عالمی سطح پر ناموس رسالت کا تحفظ بھی ضروری ہے اس کے لئے تمام انبیاء  کرام کے ناموس کے لئے عالمی سطح پر تحفظ کا قانون بنانا از حد ضروری ہے

مزید :

میٹروپولیٹن 1 -