عجلت میں لائی گئی کورونا ویکسین نہیں لیں گے، 49فیصد امریکیوں کا انکار

عجلت میں لائی گئی کورونا ویکسین نہیں لیں گے، 49فیصد امریکیوں کا انکار

  

واشنگٹن(این این آئی) ایک حالیہ سروے سے انکشاف ہوا ہے کہ تقریبا نصف امریکی کورونا ویکسین استعمال کرنے کے حق میں نہیں ہیں۔ رپورٹس کے مطابق امریکہ میں پیو ریسر چ سینٹرکے رواں ماہ کیے گئے جائزے کے نتائج کے مطابق کرونا وائرس کی ویکسین دستیاب ہونے کی صورت میں 49فیصد امریکی ویکسین لینے کے لیے تیار نہیں ہوں گے۔ جبکہ 51فیصد نے کہا ہے کہ وہ ویکسین ضرور لیں گے۔ویکسین لگوانے سے انکار کرنے والے امریکیوں نے کہا ہے کہ انہیں ویکسین کے منفی اثرات سے متعلق خدشات ہیں۔ ویکسین سے متعلق تحفظات کی وجہ یہ ہے کہ حالیہ سروے میں 77فیصد امریکیوں کا خیال ہے کہ امریکہ میں تیار کی جانے والی ویکسین عجلت میں یہ یقینی بنائے بغیر ہی فراہم کی جا سکتی ہے کہ وہ مکمل طور پر محفوظ ہے بھی یا نہیں۔پیو ریسرچ سینٹرنے سروے میں 10ہزار سے زیادہ امریکیوں کی رائے معلوم کی تھی۔ 78فیصد نے یہ خدشہ ظاہر کیا تھا کہ ویکسین جلد لانے کے دبا ؤکے پیش نظر اس کے محفوظ اور موثر ہونے کے بارے میں مکمل چھان بین کیے بغیر ہی منظوری دے دی جائے گی۔جبکہ دوسری جانب سروے میں شامل 20فیصد امریکیوں نے کہا کہ وہ ویکسین کی منظوری میں تاخیر پر پریشان ہیں اور وہ چاہتے ہیں کہ اسے جلد سے جلد مارکیٹ میں لایا جائے تاکہ اس موذی مرض کے پھیلا کو روکا جا سکے۔

انکار

مزید :

صفحہ اول -