محفل مئے کشاں کوچۂ دلبراں | بشیر بدر |

محفل مئے کشاں کوچۂ دلبراں | بشیر بدر |
محفل مئے کشاں کوچۂ دلبراں | بشیر بدر |

  

محفل مئے کشاں کوچۂ دلبراں

ہر جگہ ہو لئے اب چلیں دل کہاں

مصلحت چاہتی ہے منزل ملے

اور دل ڈھونڈتا ہے کوئی کارواں

چاندنی بھی مری طرح حیرت میں ہے

چھپ گیا کوئی آواز دے کر کہاں

جانی پہچانی ہے ہر ادا، ہر نظر

ہاں ، مگر یہ نہیں یاد دیکھا کہاں

رات یوں غم نے پھر دل میں آواز دی

جیسے صحرا کی مسجد میں شب کی اذاں

گرد اُڑ اُڑ کے منہ اپنا دیکھا کرے

رکھی ہے راہ میں آئینوں کی دُکاں

کچھ تو میں بھی بہت دل کا کمزور ہوں

کچھ محبت بھی ہے فطرتاً بدگماں

تذکرہ کوئی ہو ، ذکر تیرا رہا

اوّل و آخرش ، درمیاں درمیاں

جانے کس دیس سے دل میں آ جاتے ہیں

چاندنی رات میں درد کے کارواں

درمیاں میں نہ لائیں خدا کو بھی ہم

بس وہی وہ سنے جس کی ہے داستاں

بدرصاحب اِدھر کا رُخ کیجئے

دِلی ، لاہور ہیں شہرِ جادوگراں

شاعر: بشیر بدر

( شعری مجموعہ: آس ،سالِ اشاعت،1993)

Mehfil -e- Makashaan   ,    Koocha-e- Dilbaraan

Har    Jagah    Ho    Liay    Ab    Chalen    Dil   Kahan

Maslihat    Chaahti    Hay    Keh     Manzil    Milay

Aor    Dil     Dhoondta    Hay    Koi    Kaarwaan

Chaandni     Bhi     Miri    Tarah    Hairat    Men    Hay

Chhup    Gaya    Koi     Awaaz    Day    Kar    Kahan

Jaani    Pehchaani    Hay    Har    Adaa   ,  Har   Nazar

Haan   ,   Magar    Yeh     Nahen    Yaad    Dekha    Kahan

Raat    Yun    Gham    Nay    Phir    Dil    Men     Awaaz    Di

Jaisay     Sehraa     Ki    Masjid    Men    Subh     Ki    Azaan

Gard     Urr     Urr    K    Munh    Apna    Dekha   Karay

Rakhi    Hay    Raah    Men     Aainon    Ki    Dukaan

Kuch    To    Main     Bhi    Bahut    Dil    Ka    Kamzor    Hun

Kuch    Muhabbat    Bhi     Hay    Fitratan    Badgumaan

Tazkaraa    Koi    Ho    Zikr    Tera    Raha

Awwaal -o- Aakhirish   ,    Darmiyaan    Darmiyaan

Jaanay    Kiss     Dais    Men    Dil    Men    Aa    Jaatay    Hen

Chaandni    Raat    Men    Dard    K     Kaarwaan

Darmiyaan     Men    Na     Laaen     Khuda    Ko    Bhi    Ham

Bass    Wahi    Wo     Sunay    Jiss     Ki    Hay    Daastaan

BADR     Saahib      Idhar     Ka    Na    Rukh    Kijiay 

Dilli   ,     Lahore    Hen    Shehr  -e- Jadugaraan

Poet: Bashir    Badr

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -سنجیدہ شاعری -