پھول سا کچھ کلام اور سہی | بشیر بدر |

پھول سا کچھ کلام اور سہی | بشیر بدر |
پھول سا کچھ کلام اور سہی | بشیر بدر |

  

پھول سا کچھ کلام اور سہی

اک غزل اس کے نام اور سہی

اس کی زلفیں بہت گھنیری ہیں

ایک شب کا قیام اور سہی

زندگی کے اداس قصے ہیں

ایک لڑکی کا نام اور سہی

کرسیوں کو سنائیے غزلیں

قتل کی ایک شام اور سہی

کپکپاتی ہے رات سینے میں

زہر کا ایک جام اور سہی

 شاعر: بشیر بدر

( شعری مجموعہ: آس ،سالِ اشاعت،1993)

Phool    Sa   Kuch    Kalaam    Aor    Sahi

Ik    Ghazal    Uss    K    Naam Aor    Sahi

Uss     Ki    Zulfen    Bahut    Ghanairi   Hen

Aik    Shab    Ka    Qayaam  Aor    Sahi

Zindagi    K    Udaas     Qissay    Men

Aik    Larrki    Ka    Naam  Aor    Sahi

Kursiyon    Ko     Sunaaiay    Ghazlen

Qatl     Ki    Aik     Shaam    Aor    Sahi

Kapkapaati     Hay     Raat    Seenay    Men

Zehr    Ka    Aik    Jaam    Aor   Sahi

Poet: Bshir    Badr 

 

مزید :

شاعری -رومانوی شاعری -غمگین شاعری -