اوآئی سی کو مسلمانوں سے امتیازی سلوک، نفرت انگیز و اقعات کی نگرانی کرنی ہو گی: بلاول بھٹو

  اوآئی سی کو مسلمانوں سے امتیازی سلوک، نفرت انگیز و اقعات کی نگرانی کرنی ...

  

        نیو یارک (مانیٹرنگ ڈیسک،نیوز ایجنسیاں) وزیر خارجہ بلاول بھٹو نے کہا ہے یورپ سمیت دنیا بھر میں مقیم مسلمانوں کیخلاف امتیازی سلوک و نفرت انگیز جرائم کے واقعات کی نگرا نی کرنی ہو گی،پرامن و خوشحال افغانستان پاکستان کی ترجیح ہے، آمدہ موسم سرما میں مزید خراب ہو جائیں گے، بڑے پیمانے پر پناہ گزینوں کی نقل مکانی ہو سکتی ہے،انہوں نے اسلا می تعاون تنظیم کے رابطہ گروپ برائے مسلمانان یورپ کے اجلاس میں یورپ سمیت دنیا بھر میں مسلم اقلیتوں کو درپیش مشکلات کے حل کی تجاویز بھی پیش کیں۔ وزیر خارجہ بلاول بھٹو زرداری نے کہا او آئی سی کو نگرانی کیلئے اپنی آبزرویٹری مزید مضبوط بنانا ہو گی جس سے رجحانات سمجھنے، موثر حکمت عملی، ٹھوس اقدامات اٹھانے میں مدد ملے گی، وزیر خارجہ نے  نیویارک میں افغانستان کیلئے امریکہ کے خصوصی ایلچی تھامس ویسٹ سے ملاقات میں افغانستان اور باہر دیرپا امن واستحکام کیلئے عبوری افغان حکومت کیساتھ بین الاقوامی رابطے جا ری رکھنے کی اہمیت پر زور دیا، توسیعی ٹرائیکا میکانزم سمیت افغانستان میں پیشرفت پر علاقائی اتفاق رائے پیدا کرنے میں پاکستان کی سہولت کار کوششوں کو اجاگر کیا، افغانستان میں انسانی ہمدردی کے امکانات کا بھی حوالہ دیا، افغانستان کیلئے امریکی خصوصی نمائندے تھامس ویسٹ نے افغانستان میں امن و استحکام اور انخلا میں سہولت کیلئے پاکستان کی کوششوں کو سراہا،اس موقع پر دونوں رہنماؤں نے افغان عوام کی مشکلات کے خاتمے، علاقائی امن و استحکام کو فروغ دینے کیلئے بین الاقوامی برادری کی مسلسل کوششوں اور شمولیت کے مشتر کہ مقاصد کیلئے مسلسل تعاون کی ضرورت کو بھی تسلیم کیا۔دریں اثناء وزیر خارجہ بلاول بھٹو کی ناروے اور چینی ہم منصب سے بھی الگ الگ ملاقاتیں ہوئیں، چینی ہم منصب وانگ ڑی سے ملاقات میں دونوں وزرائے خارجہ نے دوطرفہ شراکت داری اوراقوام متحدہ سمیت تمام فورمز پر کثیرجہتی تعاون کے بارے میں تفصیلی تبادلہ خیال کیا،وزیرخارجہ نے تباہ کن سیلاب میں پاکستان کی فوری مدد کرنے پر چین کی قیاد ت، حکومت اور عوام کاشکریہ ادا کیا، دونوں وزرائے خارجہ نے تذویراتی تعاون کو مزید مستحکم کرنے،ایک دوسرے کے اہم مفادات اور بڑے تحفظات کیلئے حمایت میں اضافے کے مکمل عزم کااعادہ کیا، معاشی روابط بڑھانے، سی پیک پرکام کی رفتار تیز کرنے اوردوطرفہ سکیورٹی تعاون مضبوط کرنے کے عزم کابھی اظہارکیا، وزیرخارجہ نے آزادتجارت اور ترقی کے بارے میں چین کیساتھ پاکستان کے قریبی تعلقات کواجاگرکیا،جبکہ ناروے کے ہم منصب سے ملاقات میں پا کستان اور ناروے میں تجارت، سرمایہ کاری، ترقی ودیگر شعبوں میں تعاون مزید مستحکم کرنے اورہمہ جہت بنانے کیلئے مشترکہ کوششیں جاری رکھنے پراتفاق کیاگیا۔بلاول بھٹو زر د ا ری نے امید ظاہر کی کہ ناروے کی مزید کمپنیاں پاکستان کی پرکشش سرمایہ کاری پالیسی سے استفادہ کریں گی، بلاول بھٹو زرداری نے اقوام متحدہ کی سلامتی کونسل کی قرار دادوں کے مطابق مسئلہ کشمیر کے پرامن حل پر بھی زور دیا۔بعدازاں  وزیر خارجہ بلاول بھٹو نے نوبیل انعام یافتہ ملالہ یوسفزئی سے ہونیوالی خصوصی ملاقات کی سماجی رابطوں کی ویب سائٹ ٹوئٹر پر تصویر شیئر کرتے ہوئے لکھا ملالہ سے خواتین کے حقوق اور لڑکیوں کی تعلیم پر تبادلہ خیال کیا، پاکستان کے سیلابی صورتحال پر بھی تفصیلی بات کی، سیلاب سے آب و ہوا کی تباہی سے متاثر ہونیوالے لاکھوں چھوٹے بچوں کیلئے تعلیم کو درپیش چیلنجز، ہزاروں سکول تباہ ہونے کیساتھ، آنیوالے مشکل دنوں سے نکلنے سے متعلق بھی بات کی۔

بلاول بھٹو

مزید :

صفحہ اول -