اونچی ذات کے ہندوؤں کی دلت لڑکی سے اجتماعی زیادتی، آگ لگادی

اونچی ذات کے ہندوؤں کی دلت لڑکی سے اجتماعی زیادتی، آگ لگادی
اونچی ذات کے ہندوؤں کی دلت لڑکی سے اجتماعی زیادتی، آگ لگادی

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) بھارت میں اونچی ذات کے دو ہندو مردوں نے ایک 16سالہ دلت لڑکی کو اجتماعی زیادتی کا نشانہ بنانے کے بعد آگ لگا دی۔نجی ٹی وی چینل 24نیوز کے مطابق یہ انسانیت سوز واردات ریاست اترپردیش میں ہوئی ۔ لڑکی کو انتہائی زخمی حالت میں لکھنؤ کے ایک ہسپتال میں داخل کیا گیا تھا جہاں وہ چند روز تک زندگی و موت کی کشمکش میں رہنے کے بعد گزشتہ روز دم توڑ گئی۔ 

مقامی پولیس چیف دنیش کمار پربھو کا کہنا ہے کہ دونوں ملزمان کو گرفتار کر لیا گیا اور ہم متاثرہ لڑکی کے لواحقین کو یقین دلاتے ہیں کہ ملزمان کے خلاف سخت کارروائی عمل میں لائی جائے گی۔ واضح رہے کہ بھارت میں دلت لڑکیوں کے ساتھ جنسی زیادتی اور قتل کی وارداتیں روز کا معمول ہیں۔

 اس لڑکی کی موت سے دو دن قبل اسی علاقے میں 2دلت بہنوں کو 6اونچی ذات کے ہندومردوں نے اجتماعی زیادتی کے بعد پھندہ دے کر قتل کر دیا تھا۔ ان بہنوں کی عمریں 15اور 17سال تھیں۔اونچی ذات کے بااثر ہندو جبراً لواحقین کو مقدمے کی پیروی سے ہی روک دیتے ہیں جس کی وجہ سے ملزمان کی اکثریت کو سزا ہی نہیں ہو پاتی۔

مزید :

بین الاقوامی -