ابھینندن کا طیارہ گرنے کے تقریباً3 سال بعد بھارتی فضائیہ کا مگ 21 طیاروں کا ایک سکواڈ رن ریٹائر کرنے کا اعلان

ابھینندن کا طیارہ گرنے کے تقریباً3 سال بعد بھارتی فضائیہ کا مگ 21 طیاروں کا ...
ابھینندن کا طیارہ گرنے کے تقریباً3 سال بعد بھارتی فضائیہ کا مگ 21 طیاروں کا ایک سکواڈ رن ریٹائر کرنے کا اعلان

  

نئی دہلی(مانیٹرنگ ڈیسک) پاک فضائیہ کی طرف سے بھارتی پائلٹ ابھینندن ورتھمان کا ’مگ 21‘ طیارہ مارگرانے کے تین سال بعد بھارتی فضائیہ نے مگ 21لڑاکا طیاروں کی ایک سکواڈرن کو ریٹائر کرنے کا اعلان کر دیا۔" ڈیلی پاکستان گلوبل" کے مطابق ابھینندن ورتھمان کی طرف سے جھوٹا دعویٰ کیا گیا تھا کہ اس نے اپنا طیارہ گرنے سے پہلے پاک فضائیہ کے ایک ایف 16کو گرا دیا تھا۔ اس کے اس دعوے کی امریکہ کی طرف سے بھی تردید کر دی گئی تھی اور بتادیا گیا تھا کہ پاکستان کے پاس موجود ایف 16طیارے پوری تعداد میں موجود ہیں۔

اس کے باوجود بھارتی فضائیہ نے اس جھوٹے دعوے کی وجہ سے ابھینندن ورتھمان کو ترقی دے کر ونگ کمانڈر بنا دیا تھا۔ ابھینندن اور اس کے ساتھی پاک فضائیہ کے ہاتھوں ایسے رسوا ہوئے کہ دنیا نے دیکھا مگر جونہی اسے واہگہ بارڈر کے راستے بھارت کے حوالے کیا گیا، اس کا استقبال ایک ہیرو کی طرح کیا گیا اور کہا گیا کہ وہ بھارت کا واحد پائلٹ ہے جس نے پاکستان کا ایف 16طیارہ گرایا ہے۔ امریکی حکام نے بھارت کا یہ دعویٰ یہ کہہ کر مسترد کر دیا کہ پاکستان کے پاس موجود ایف 16طیاروں کی گنتی پوری ہے اور کوئی طیارہ تباہ نہیں ہوا۔ اب بھارتی فضائیہ نے اس مگ 21کی ایک سکواڈرن کو ریٹائر کرنے کا اعلان کر دیا ہے۔

مزید :

بین الاقوامی -