چینی سرمایہ کاری سے بیروزگاری میں کمی ہوگی: شیخ محمدابراہیم

چینی سرمایہ کاری سے بیروزگاری میں کمی ہوگی: شیخ محمدابراہیم

 لاہور(کامرس رپورٹر)چینی سرمایہ کاری سے ملک میں معاشی ،ا قتصادی، صنعتی انقلاب کے ساتھ ساتھ روز گار کے بے شمار مواقع پیدا ہونے سے بے بروز گاری گراف میں غیر معمولی کمی ہو گی ، چینی صدر کے دورہ پاکستان کے حوالے سے میڈیا کے نمائندوں سے کینن فوم انڈسٹری کے سی ای او و لائنز کلب کے گورنر شیخ محمد ابراہیم نے کہا کہ چین پاکستان اقتصادی راہداری نہ صرف پاکستان کے چاروں صوبوں اور گلگت بلتستان کے ترقیاتی عمل میں ممدومعاون ثابت ہونے والے اقدامات کی عملی مظہر ہے بلکہ خطے میں علاقائی امن،استحکام اور خوشی کا ضامن ہے۔اس منصوبے کے تحت توانائی،انفراسٹرکچر،زرعی ترقی ،روزگار کے مواقع،تعلیم کا فروغ،صحت عامہ اور عوامی روابطہ کے اہم ترین منصوبوں میں باہمی تعمیر و ترقی کا عمل تیزی سے جاری ہے۔  چین پاکستان اقتصادی راہداری اپنے حلقہ ء اثر میں چین،جنوبی ایشیاء اور وسطی ایشیاء میں آباد دنیا کی تقریباََ نصف آبادی یعنی تین ارب افراد کو بہتر معیار زندگی فراہم کرنے کی صلاحیت سے مالا مال ہے۔انہوں نے امید کا اظہار کرتے ہوئے کہا کہ 20ارب ڈالرز کی بے مثال چینی سرمایہ کاری سے بننے والے پورٹ قاسم کول پاور پلانٹ،حبکو کول،ساہیوال کول،سالٹ رینج، سچل ونڈ پراجیکٹ،ہائیڈرو چائنہ ونڈ پراجیکٹ اور دیگر کوئلے ،پانی ،ہوا اور شمسی توانائی پر مشتمل سستے ایندھن سے چلنے والے منصوبوں کی تکمیل سے ملک بھر میں بجلی کی کمی کا خاتمہ ہو گا۔ شیخ محمد ابراہیم نے کہا کہ وزیراعظم محمد نواز شریف اور وزیر اعلیٰ شہباز شریف کی قیادت میں پاکستان اور چین کے درمیان دیرینہ تعلقات نے ایک نیا موڑ لیا ہے۔چینی صدر کے تاریخی دورہ پاکستان سے دونوں ملکوں کے درمیان موجودہ بے مثال اقتصادی تعاون نہ صرف پاکستان میں تجارت ،سیاحت اور سماجی و اقتصادی سر گرمیوں میں تیزی لائے گا بلکہ یہ خطے کی تاریخ کی سمت طے کرنے میں بھی مددگار ثابت ہو گا۔چینی صدر کے دورہ پاکستان سے ملک میں معاشی انقلاب آئے گا، انہو ں نے کہا کہ چین کے سرمایہ کاروں کو پاکستان میں سرمایہ کاری کے لئے موجودہ حکومت کو جتنا بھی خراج تحسین پیش کیا جائے کم ہے

مزید : کامرس