وزیر اعلی محبوبہ مفتی اننت ناگ کی اسمبلی نشست سے انتخابی میدان میں اترے گی

وزیر اعلی محبوبہ مفتی اننت ناگ کی اسمبلی نشست سے انتخابی میدان میں اترے گی

سری نگر(کے پی آئی) بھارتی الیکشن کمیشن نے اننت ناگ اسمبلی حلقہ کے ضمنی انتخاب کا بگل بجاتے ہوئے 16مئی کو الیکشن کرانے کا اعلان کردیا۔ اس دوران سیاسی جماعتوں نے لنگر لنگوٹ کسنے شروع کر دئیے ہیں جبکہ حکمران جماعتوں کے علاوہ اپوزیشن بھی انتخابی تیاریوں میں جٹ گئی ہے ۔ وزیر اعلی محبوبہ مفتی از خود اس نشست سے انتخابی میدان میں اترے گی کیونکہ آئندہ 6ماہ کے دوران انہیں ریاستی اسمبلی کا ممبر بننا نہایت ہی ضروری ہے ۔ ذرائع سے مزید پتہ چلا ہے کہ ایوان بالا یا قانون ساز کونسل میں کوئی بھی نشست خالی نہیں ہے جہاں سے محبوبہ مفتی کو نامزد کیا جاسکتا ہے اسلئے انہیں انتخابی دنگل میں شرکت کرکے فتح یاب ہونا ضروری ہے ۔ اس دوران اپوزیشن جماعتوں کانگریس اور نیشنل کانفرنس نے بھی اس بات کا فیصلہ نہیں کیا ہے کہ حلقہ انتخاب اننت ناگ میں قبل از الیکشن ہی کوئی شراکت داری ممکن ہوسکتی ہے یا نہیں ۔ تاہم بی جے پی ذرائع کا کہنا ہے کہ انتخابات میں وہ اپنی حلیف جماعت پی ڈی پی کے لئے مہم چلائیں گی۔ ادھر نیشنل کانفرنس اورکانگریس نے ابھی تک یہ فیصلہ نہیں کیا ہے کہ دونوں جماعتیں قبل انتخابات کوئی شراکت داری کریں گی ۔

بھارتی الیکشن کمیشن نے 16مئی کو حلقہ اسمبلی انتخاب اننت ناگ میں ضمنی الیکشن کرانے کا اعلان کیا ہے جبکہ مذکورہ نشست سابق ریاستی وزیرا علی مفتی محمد سعید کے انتقال کے بعد خالی ہو گئی تھی ۔ چیف الیکٹورل آفیسر شانت منو کا کہنا ہے کہ اس بات کا فیصلہ لیا گیا کہ 87نشستوں والی اسمبلی میں اننت ناگ حلقہ انتخاب کے ضمنی انتخابات 16مئی کو کرایں جائیں گے۔ ادھر الیکشن کمیشن آف انڈیا نے بھی باضابطہ طور پر اس حوالے سے ایک نوٹیفکیشن جاری کی ہے جس میں کہا گیا ہے کہ 29اپریل تک کاغذات نامزدگی داخل کئے جاسکتے ہیں جبکہ 30اپریل کو کاغذات کی جانچ پڑتال ہونے کے بعد 16مئی کو انتخابات کرائیں جائیں گے۔ الیکشن کمیشن آف انڈیا کی طرف سے جاری نوٹیفکیشن میں کہا گیا ہے کہ 19مئی کو انتخابی نتائج کااعلان کیاجائیگا۔

مزید : عالمی منظر