تن سازی کے کلبوں میں ناتجربہ کار ٹرینرز ، ممنوعہ ادویات کا استعمال ، متعلقہ ادارے خاموش

تن سازی کے کلبوں میں ناتجربہ کار ٹرینرز ، ممنوعہ ادویات کا استعمال ، متعلقہ ...

 لاہور (عامر بٹ سے) صوبائی دارالحکومت میں جسم کو جلد از جلد خوبصورت بنانے کا جھانسہ دے کر نا تجربہ کار جم مالکان نوجوان نسل کی زندگیوں سے کھیلنے لگے ،جانوروں کو لگائے جانے والے انجکشن ،مضر صحت گولیاں،ناقص اور زائد المعیا د فوڈ سپلیمنٹ تن سازوں کو استعمال کروائے جانے کا انکشاف، ناتجربہ کار جم مالکان لاکھوں روپے کی دیہاڑیاں لگانے میں مصروف، زائد المیعاد سٹیرائیڈز میڈیسن کا سٹاک کلبوں کی زینت اور ان کے کھلے عام استعمال نے باڈی بلڈنگ فیڈریشن اور ڈرگ انسپکٹرز کی کارکردگی کا پول کھول دیا ،20روز میں4تن سازوں کی موت کے بعد بھی باڈی بلڈنگ فیڈریشن کو ہو ش نہ آیا، ناقص حکمت عملی اور مانیٹرنگ کے باعث لاہور میں 2ہزار سے زائد غیر رجسٹرڈ باڈی بلڈنگ کلبوں کی بھر مار،تن سازی اور ٹریننگ سے ناواقف افراد نے صرف پیسے کمانے کے لئے جم کھول لئے جہاں بلا روک ٹوک کم عمر نوجوانوں کوسٹیرائیڈ گولیاں،ٹیکے اور سپلیمنٹ استعمال کروایا جارہا ہے تفصیلات کے مطابق چیک اینڈ بیلنس کا سسٹم نہ ہونے سے زائد المیعاد سٹیرائیڈز میڈیسن کا سٹاک ہر کلب کی زینت بنا ہوا ہے ۔ گزشتہ 20روز میں صرف لاہور میں 4 تن سازمر گئے ۔لاہور میں اس وقت باڈی بلڈنگ گیم سے وابستہ 2ہزار سے زائد جم کلب کھل چکے ہیں جن میں چند ایک ایسے ہوں گے جو کہ پاکستان باڈی بلڈنگ فیڈریشن یاتن ساز فیڈریشن سے رجسٹرڈ ہوں گے اور پروفیشنل تن سازوں کی زیر نگرانی وہاں نوجوانوں کو ٹریننگ دی جا رہی ہو گی جبکہ زیادہ تر باڈی بلڈنگ جم کلب ایسے ہیں جو کہ غیر رجسٹرڈ ہیں۔ قابل ذکر بات تو یہ ہے کہ یہ میڈیسن ان نوجوانوں کو دی جا رہی ہے جن کی عمر 17 سال سے لے کر 24 سال تک ہے۔ دوران سروے یہ بھی انکشاف ہوا کہ صوبائی دارلحکومت کے جم کلبوں میں اس وقت جو غیر ممنوع انجکشن استعمال کروائے جا رہے ہیں ان میں ڈیکا ڈیورابولان،میتھی کوبال، ٹیسٹوویران، ڈاکا 100، ڈیکامیٹا سون سمیت دیگر مہنگے اور انتہائی طاقتور انجکشن کے نام باڈی بلڈنگ جم کلبوں کے مالکان کی ڈائریوں پر اندراج ہیں اسی طرح اسٹیرائیڈز گولیاں بھی سرعام نوجوان نسل کو استعمال کرواتے ہوئے ان کو باقاعدہ ان کا عادی بنایا جا رہا ہے ان گولیوں میں امائنوفیول،امائنو 2222،امائنو 5600 ، اینڈرول،ٹرین بولین سنٹرم گولڈ،میگاگینگ فیول،باڈی شیپ اپ،فیس آن، اینابول، ڈینابول، سائیپونیکس، ایوی اون، سنٹرم سیلور، انیمل پیک، پریما بولین، تھیرا گران ایم سمیت 100 سے زائد گولیاں طاقت میں اضافہ اور جلد از جلد مسل پمپ کرنے کی یقین دہانی کرواتے ہوئے باقاعدگی سے جم کلب خانوں میں فروخت کروائی جا رہی ہیں۔ اس کے علاوہ جو فوڈ سیپلیمنٹ نوجوان نسل کو استعمال کروائے جا رہے ہیں اس کے حوالے سے انکشاف ہوا ہے کہ راوی روڈ کے ارد گرد ایسی سینکڑوں فیکٹریاں قائم ہو چکی ہیں جو کہ جعلی فوڈ سیپلیمنٹ تیار کر رہی ہیں اور خالی ڈبوں کے اوپر انگلش بلڈرز کی تصاویر اور اسٹیکرز تیار کر کے دو نمبر پاؤڈر ان ڈبوں میں بھر بھر کر جمع کلبوں میں بھجوا رہے ہیں

مزید : میٹروپولیٹن 1