سرکاری محکموں میں کرپشن و رشوت خوری کا بازار گرم

سرکاری محکموں میں کرپشن و رشوت خوری کا بازار گرم

  

ہری پور (نامہ نگار) تحریک انصاف کے دعوؤں کے برعکس سرکاری محکموں میں کرپشن و رشوت خوری کا بازار گرم ، عمران خان تمام تر کوششوں کے باوجود سرکاری محکموں سے رشوت و کرپشن ختم کرنے میں کامیاب نہ ہوسکے ، تحریک انصاف نے خیبر پختونخواہ نے صوبائی حکومت تشکیل دینے کے بعد سرکاری محکموں سے رشوت ، کمیشن اور کرپشن کے خاتمے کے لیے مختلف اقدامات کیے لیکن یہ اقدامات ثمر آور ثابت نہ ہوسکے ، سرکاری محکموں کے اہلکاروں نے ماضی کی روایت برقرار رکھتے ہوئے بدستور رشوت ، کرپشن اور کمیشن خوری کا بازار گرم کر رکھا ہے ، آج تک جتنے لوگ بھی رشوت خوری کے الزام میں رنگے ہاتھوں گرفتار ہوئے انہیں سزا نہ مل سکی بلکہ وہ دوبارہ اپنی سیٹوں پر براجمان ہو کر رشوت و کمیشن خوری کا بازار گرم کیے ہوئے ہیں جس وجہ سے عوام کی تحریک انصاف سے وابستہ امیدیں بھی دم توڑ رہی ہیں ، عوام کی طرف سے بھر ملا اس بات کا اظہار کیا جارہا ہے کہ اگر تحریک انصاف تمام تر دعوؤں اور اقدامات کے باوجود کرپشن ، کمیشن و رشوت خوری کا خاتمہ نہیں کر سکی تو آئندہ کوئی بھی حکومت کامیاب نہیں ہوسکے گی ، عوام کی طرف سے کیا گیا یہ سوال بجا ہے کہ سرکاری محکموں میں ہونے والی کرپشن رشوت خوری اور کمیشن ارباب اقتدار کی ملی بھگت یا چشم پوشی کی وجہ سے ہے یا کرپٹ سسٹم اتنا مضبوط ہے کہ تحریک انصاف اس کے خاتمے میں بے بس دکھائی دیتی ہے

مزید :

پشاورصفحہ آخر -