ٹانک ،ایم اینڈ آر کی مد میں دی گئی فنڈز فائلوں کی نذر

ٹانک ،ایم اینڈ آر کی مد میں دی گئی فنڈز فائلوں کی نذر

  

ٹانک (نمائند ہ خصوصی) محکمہ سی اینڈ ڈبلیو ٹانک کو سالانہ ایم اینڈ ار کی مد میں دیا گیا فنڈ فائلوں کی نذز،سڑکوں اور بلڈنگ پر ایک پیسہ نہ لگایا جاسکا ۔تفصیلا ت کے مطابق محکمہ ورکس اینڈ سروسز ٹانک کوسالانہ ایم اینڈاربرائے 2016-17 کی مد میں ملنے والے تین کروڑ سینتیس لاکھ سے زائد فنڈ جسکے ٹینڈرز ہونے کے باوجود ٹانک کی سڑکوں اور بلڈنگ کی مرمتی پر تاحال ایک روپے بھی خرچ نہ کیا جاسکا جسکے باعث سڑکیں کھنڈرات اور سرکاری عمارتیں بھوت بنگلوں میں تبدیل ہورہی ہیں جب اس سلسلہ میں متعلقہ محکمہ کے ایگزیکٹوانجینئر ز سے رابطہ کیاگیا توانہوں نے صوبائی سیکرٹری سی اینڈ ڈبلیو کی جانب سے تحریری مراسلہ دیکھا کر کہا کہ ایم اینڈ ار کیلئے ائی ہوئی خطیر رقم کوسڑکوں اور بلڈنگزپر خرچ نہ کیا جائے واضح رہے کہ مالی سال 2016-17کے ختم ہونے میں دو ماہ کا عرصہ باقی ہے جبکہ اندرونی ذرائع کے مطابق جون میں مذکورہ فنڈ کو تین حصوں پر تقسیم کرکے بند ر بانٹ کی نذر کر نے کا منصوبہ بنایا جاچکاہے ٹھیکیدار نے نام ظاہر نہ کرنے کی شرط پرمطالبہ کیا کہ صوبائی سکرٹری کی جانب سے جاری ہونے والے مراسلے کی تحقیقات سمیت ایم اینڈا ر فنڈ کوفوری طور پر استعمال کیا جائے اورمذکورہ دھندے میں ملوث افراد کے خلاف اعلیٰ سطحی تحقیقات کرکے احتساب کے شکنجے میں کسا جائے۔

مزید :

پشاورصفحہ آخر -