فحش اشتہار میں کام کرنے پر آواز اٹھانے والے بھارتیوں کو بے باک اداکارہ سنی لیون نے کھلا چیلنج دے دیا ،ایسی بات کہہ دی کہ بھارتیوں کے غصے کی انتہا نہ رہی

فحش اشتہار میں کام کرنے پر آواز اٹھانے والے بھارتیوں کو بے باک اداکارہ سنی ...
فحش اشتہار میں کام کرنے پر آواز اٹھانے والے بھارتیوں کو بے باک اداکارہ سنی لیون نے کھلا چیلنج دے دیا ،ایسی بات کہہ دی کہ بھارتیوں کے غصے کی انتہا نہ رہی

  

ممبئی(ڈیلی پاکستان آن لائن)بھارت کی بے باک اداکارہ سنی لیون نے فحش اشتہار میں کام کرنے سے متعلق بھارتیوں کی تنقید پرکھلا چیلنج کردیا ،انہوں نے بھارتی عوام کو مخاطب کرتے ہوئے کہا ہے کہ میرے خلاف مقدمہ کرو ۔

تفصیلات کے مطابق معروف اداکارہ سنی لیون کنڈوم کے اشتہار میں منظر عام پر آئیں تو بھارت میں ہنگامہ برپا ہو گیا ،انتہا پسند ہندو تنظیموں اور سوشل میڈ یا صارفین نے سنی لیون کو خوب تنقید کا نشانہ بنا یا ،وویمن ونگ آف ری پبلکن پارٹی آف انڈیانے اشتہار پر احتجاج کرتے ہوئے کہا کہ اس اشتہار کے مناظر بہت ہی برے اور پیغام بھی مختلف تھا تاہم اس حوالے سے پہلے تو بے باک اداکارہ خاموش رہیں لیکن پھر جب خاموشی توڑی تو پھر ایسا بیان دے دیا کہ بھارتی عوام کو مرچیں لگ جائیں گی ۔

فحش ترین پاکستانی اشتہار جسکے ٹی وی پر چلتے ہی سوشل میڈیا پر طوفان آگیا

سنی لیون نے تنقید کا جواب دیتے ہوئے کہا کہ بھارت میں جمہوریت اور آواز اٹھانے کی آزادی ہے جو کہ اچھی بات ہے ،اگر لوگ میرے خلاف آواز اٹھانا چاہتے ہیں تو وہ آگے بڑھ کر یہ کام کر سکتے ہیں لیکن صرف حکومت فیصلہ کرے گی کہ شہریوں کے لیے کیا بہتر ہے ۔بے باک اداکارہ نے کہا کہ جب میں اشتہار کے لیے معاہدہ کر رہی تھی تومیں نے اس کی اخلاقی ذمہ داری بھی لی تھی ،یہ اسی طرح ہے کہ جب کوئی شادی شدہ جوڑا اولاد کی خواہش کرتا ہے تو وہ اس کی ذمہ داری بھی لیتاہے ۔

مزید :

تفریح -