”وعدےکے باوجود گوشت کیوں کھایا “، بھارتی خاتون شوہر سے طلاق کیلئے عدالت پہنچ گئی

”وعدےکے باوجود گوشت کیوں کھایا “، بھارتی خاتون شوہر سے طلاق کیلئے عدالت ...
”وعدےکے باوجود گوشت کیوں کھایا “، بھارتی خاتون شوہر سے طلاق کیلئے عدالت پہنچ گئی

  

نئی دہلی (ڈیلی پاکستان آن لائن ) ”گوشت کیوں کھایا “ بھارتی خاتون نے شوہر سے طلاق کیلئے عدالت سے رجوع کر لیا۔

”دی ٹائمز آف انڈیا “ کے مطابق 23سالہ بھارتی لڑکی نے شوہر کے تشدد سے تنگ آکر طلاق کیلئے عدالت سے رجو ع کر لیا جس نے موقف اپنایا گیا ہے کہ اس کے شوہر نے شادی کرتے وقت وعدہ کیا تھا کہ کبھی گوشت نہیں کھائے گا مگر ا ب اس دعدے کی خلاف ورزی کرتا ہے جس کے بعد ہمارا گزار ممکن نہیں رہا اور اس کا واحد حل طلاق ہے۔

کراچی میں اعلیٰ سرکاری افسر کے بیٹے کو قتل کر دیا گیا ،یہ کون ہیں اور قتل کس نے کیا ؟جانکر آپ بھی خوفزدہ ہو جائیں گے

درخواست کے مطابق ریما دوشی نامی لڑکی اور کرن ایک دوسرے کو پسند کرتے تھے مگر لڑکا” راجپوت“ برادری سے تعلق رکھتا تھا جو گوشت کھانے کو معیوب نہیں سمجھتے تھے جبکہ لڑکی” جین“ برادری کی تھی جنہیں لڑکے کے گوشت کھانے پر شدید اعتراض تھا تاہم نوجوان نے ریما سے وعدہ کیا تھا کہ وہ محبت کیلئے یہ سب چھوڑ دیگا جس پر لڑکی اور اس کے والدین شادی کیلئے رضا مند ہوئے تھے ۔ریما کو چند روز قبل اپنے شوہر کے بارے میں پتہ چلا کہ اس نے گوشت کھایا ہے جس پر اس نے اپنے شوہر سے وضاحت طلب کی تو دونوں میں جھگڑا شروع ہو گیا اور مبینہ طور پر کرن نے ریما کو شدید تشدد کا نشانہ بنایا اور جان سے مارنے کی دھمکی بھی دی ۔

بھارت میں شہریوں کی سہولت کیلئے پٹرول اور ڈیزل گھر وں میں سپلائی کرنے کا منصوبہ تیار

اس واقعے کے بعد ریما اپنے بچوں کےساتھ والدین کے گھر چلی گئی اور پھر تھانے جا کر درخواست دیدی جس میںموقف اپنایا گیا ہے کہ کرن اسے تھوڑا سا خرچہ دیتا ہے اور اپنے دوستوں کے ساتھ گوشت بھی کھاتا ہے جبکہ اس نے شادی سے قبل یہ وعدہ کیا تھا کہ وہ گوشت نہیں کھائے گا اور سبزیوں پر ہی گزارا کریگا ۔

لڑکی کے شوہر کرن نے اپنے بیان میں کہا کہ اس نے ریما کے سامنے کبھی گوشت نہیں کھایا اور نہ ہی کبھی اسے کسی ایسی جگہ لیکر گیا جہاں گوشت سے تواضع کی گئی ہو ۔ ”میں جب بھی دوستوں کے ساتھ باہر جاتا ہوں تو تبھی گوشت کھاتا ہوں اور شراب نوشی کرتا ہوں “۔

حکام نے دونوں میں صلح کرانے کی کوشش بھی کی مگر لڑکی نے شوہر کیساتھ جانے سے صاف انکار کردتے ہوئے کہا کہ وہ اس کیخلاف ایف آئی آر بھی درج نہیں کرانا چاہتی اور طلاق چاہتی ہے جس کے بعدونوں نے اپنی مرضی سے طلاق کیلئے عدالت جانے کا فیصلہ کیا ۔

مزید :

ڈیلی بائیٹس -