جماعت اسلامی کی عوامی مسائل پر سیاست ،دوسری جماعتیں پیروی پر مجبور

جماعت اسلامی کی عوامی مسائل پر سیاست ،دوسری جماعتیں پیروی پر مجبور

کراچی (اسٹاف رپورٹر)جماعت اسلامی ایک مرتبہ پھر کراچی کی سیاست میں متحرک ہوگئی ہے ۔عوامی مسائل کے حوالے سے گزشتہ دنوں نادرا اور بجلی کی تقسیم کار کمپنی کے خلاف ہونے والے احتجاج کو بھرپور عوامی پذیرائی بخشی ہے ۔جماعت اسلامی کی عوامی جدوجہد کی وجہ سے وزیراعلیٰ سندھ سید مراد علی شاہ بھی ادارہ نور حق آنے پر مجبور ہوئے اور بات ایوان وزیراعظم تک پہنچانے کا وعدہ کیا ہے ۔تفصیلات کے مطابق کراچی کی سیاست میں اس وقت عوامی مسائل کے حوالے سے تمام سیاسی جماعتیں متحرک نظرآرہی ہیں لیکن اس سلسلے کا آغاز جماعت اسلامی کراچی نے پچھلے سال کراچی میں بدترین لوڈشیڈنگ کے خلاف کیا ۔جماعت اسلامی کا یہ احتجاج صرف چند یوم تک محدود نہیں رہا بلکہ اس وقت گذرنے کے ساتھ شدت آتی گئی اور ایک سال سے جماعت اسلامی کی یہ تحریک جاری ہے ۔کراچی کے عوام کو بجلی کی تسلسل کے ساتھ فراہمی کے لیے جماعت اسلامی نہ صرف عوامی سطح پر احتجاج کررہی ہے بلکہ اس نے عدالتوں کا دروازہ بھی کھٹکھٹایا ہے ۔اب جماعت اسلامی کی پیروی کرتے ہوئے پی ایس پی اور ایم کیو ایم پاکستان نے بھی بجلی کے بحران اور بجلی کی تقسیم کار کمپنی کے خلاف احتجاج کاسلسلہ شروع کیا ہے ۔جماعت اسلامی نے 27اپریل کو کراچی میں ہڑتال کی اپیل بھی کی ہوئی ہے جس کے لیے تاجر برادری نے ان کو بھرپور تعاون کا یقین دلایا ہے کیونکہ صنعتی علاقوں میں بے روزگاری میں اضافہ ہورہا ہے ۔شہری حلقوں نے جماعت اسلامی کی اس بھرپور عوامی جدوجہد خوش آئند قرار دیتے ہوئے اس کی قیادت کو خراج تحسین پیش کیا ہے ۔

مزید : کراچی صفحہ اول