ڈہرکی ‘ آگ لگنے کے دو واقعات میں 30گھر جل کر خاکستر ہوگئے

ڈہرکی ‘ آگ لگنے کے دو واقعات میں 30گھر جل کر خاکستر ہوگئے

ڈہرکی(نامہ نگار) آگ کے پہلے واقع میں ڈہرکی کے نواحی گاؤں محمدعلی مہر میں گھر سے چنگاری اٹھنے پر آگ لگ گئی اوردیکھتے ہی دیکھتے آگ نے میر محمدشیخ،شعبان ، عثمان،شہزادو،شاہ علی،فتح محمد، قاسم ،سمیت 20افرادکے گھروں کوخاکسترکردیا جبکہ دوسرے واقع میں بجلی کے شارٹ سرکٹ سے لگنے والی آگ نے محبت لکھن گاؤں کے رہائشیوں فقیرمحبت لکھن،پیرانوں، علی گل،گھریو،محمدعمر،حافظ(بقیہ نمبر18صفحہ12پر )

حضوربخش،نصیراحمدلکھن سمیت دس افرادکے گھروں کو آگ نے اپنی لپیٹ میں لے لیا جس کے نتیجہ میں دونوں گاؤں کے رہائشیوں کے گھروں میں پڑاہوا لاکھوں رپوں کا قیمتی سامان جل کرراکھ کا ڈھیربن گیا اورگھروں میں بندھی ہوئی بھینسیں اوربکریاں بھی جھلس کرہلاک ہوگئیں آگ لگنے کے دونوں واقعات کی مقامی انتظامیہ کو اطلاع دی گئی لیکن فائربرگیڈکی گاڑی نہ پہنچی علاقہ مکینوں نے اپنی مدد آپ کے تحت آگ بجھاتے رہے لیکن تیزہواچلنے کے باعث آگ پر قابونہ پیا جاسکا جسکی وجہ سے اتنا بڑا نقصان ہوگیا متاثرین نے وزیراعلیٰ سندھ اوردیگراعلیٰ حکام سے اپیل کی ہے کہ غفلط برتنے والے فائر برگیڈعملہ کے خلاف سخت کاروائی اورہماری مددکی جائے۔

مزید : ملتان صفحہ آخر